Sign in to follow this  
  • entries
    452
  • comments
    2
  • views
    31,995

About this blog

Urdu shairy ki duniya. This blog has RSS of latest shairy o shairy topics from fundayforum.com.

If you are poetry lover please share here your fav poetry in comments. 

( Fundayforum.com)

fdwatermarkfd.png

Entries in this blog

 

یوں آرہا ہے آج لبوں پر کسی کا نام

یوں آرہا ہے آج لبوں پر کسی کا نام
ہم پڑھ رہے ہوں جیسے چُھپا کر کسی کا نام
سُنسان یُوں تو کب سے ہے کُہسارِ باز دِید
کانوں میں گوُنجتا ہے برابر کسی کا نام
دی ہم نے اپنی جان تو قاتِل بنا کوئی
مشہُور اپنے دَم سے ہے گھر گھر کسی کا نام
ڈرتے ہیں اُن میں بھی نہ ہو اپنا رقیب کوئی
لیتے ہیں دوستوں سے چُھپا کر کسی کا نام
اپنی زبان تو بند ہے، تم خود ہی سوچ لو
پڑتا نہیں ہے یونہی سِتمگر کسی کا نام
ماتم سَرا بھی ہوتے ہیں کیا خود غَرَض قتیل
اپنے غموں پہ روتے ہیں لے کر کسی کا نام



Click to View the full poetry article at (fundayforum.com)

WaQaS DaR

WaQaS DaR

 

یار کو دیدۂ خوں بار سے اوجھل کر کے

یار کو دیدۂ خوں بار سے اوجھل کر کے
مجھ کو حالات نے مارا ہے مکمل کر کے
جانب شہر فقیروں کی طرح کوہ گراں
پھینک دیتا ہے بخارات کو بادل کر کے
جل اٹھیں روح کے گھاؤ تو چھڑک دیتا ہوں
چاندنی میں تری یادوں کی مہک حل کر کے
دل وہ مجذوب مغنی کہ جلا دیتا ہے
ایک ہی آہ سے ہر خواب کو جل تھل کر کے
جانے کس لمحۂ وحشی کی طلب ہے کہ فلک
دیکھنا چاہے مرے شہر کو جنگل کر کے
یعنی ترتیب کرم کا بھی سلیقہ تھا اسے
اس نے پتھر بھی اٹھایا مجھے پاگل کر کے
عید کا دن ہے سو کمرے میں پڑا ہوں اسلمؔ
اپنے دروازے کو باہر سے مقفل کر کے


Click to View the full poetry article at (fundayforum.com)

WaQaS DaR

WaQaS DaR

 

بات کرنی مجھے مشکل کبھی ایسی تو نہ تھی

بات کرنی مجھے مشکل کبھی ایسی تو نہ تھی
جیسی اب ہے تری محفل کبھی ایسی تو نہ تھی
لے گیا چھین کے کون آج ترا صبر و قرار
بے قراری تجھے اے دل کبھی ایسی تو نہ تھی
اس کی آنکھوں نے خدا جانے کیا کیا جادو
کہ طبیعت مری مائل کبھی ایسی تو نہ تھی
عکس رخسار نے کس کے ہے تجھے چمکایا
تاب تجھ میں مہ کامل کبھی ایسی تو نہ تھی
اب کی جو راہ محبت میں اٹھائی تکلیف
سخت ہوتی ہمیں منزل کبھی ایسی تو نہ تھی
پائے کوباں کوئی زنداں میں نیا ہے مجنوں
آتی آواز سلاسل کبھی ایسی تو نہ تھی
نگہ یار کو اب کیوں ہے تغافل اے دل
وہ ترے حال سے غافل کبھی ایسی تو نہ تھی
چشم قاتل مری دشمن تھی ہمیشہ لیکن
جیسی اب ہو گئی قاتل کبھی ایسی تو نہ تھی
کیا سبب تو جو بگڑتا ہے ظفرؔ سے ہر بار
خو تری حور شمائل کبھی ایسی تو نہ تھی


Click to View the full poetry article at (fundayforum.com)

WaQaS DaR

WaQaS DaR

 

اگر یہ کہہ دو بغیر میرے نہیں گزارہ تو میں تمہارا

اگر یہ کہہ دو بغیر میرے نہیں گزارہ تو میں تمہارا
یا اس پہ مبنی کوئی تأثر کوئی اشارا تو میں تمہارا
غرور پرور انا کا مالک کچھ اس طرح کے ہیں نام میرے
مگر قسم سے جو تم نے اک نام بھی پکارا تو میں تمہارا
تم اپنی شرطوں پہ کھیل کھیلو میں جیسے چاہے لگاؤں بازی
اگر میں جیتا تو تم ہو میرے اگر میں ہارا تو میں تمہارا
تمہارا عاشق تمہارا مخلص تمہارا ساتھی تمہارا اپنا
رہا نہ ان میں سے کوئی دنیا میں جب تمہارا تو میں تمہارا
تمہارا ہونے کے فیصلے کو میں اپنی قسمت پہ چھوڑتا ہوں
اگر مقدر کا کوئی ٹوٹا کبھی ستارا تو میں تمہارا
یہ کس پہ تعویذ کر رہے ہو یہ کس کو پانے کے ہیں وظیفے
تمام چھوڑو بس ایک کر لو جو استخارہ تو میں تمہارا


Click to View the full poetry article at (fundayforum.com)

WaQaS DaR

WaQaS DaR

 

Mai ravaan dairey mai rah gaya hun

میں رواں دائرے میں رہ گیا ہوں
اس لئے راستے میں رہ گیا ہوں
ہر خسارے کو سوچ رکھا تھا
میں بہت فائدے میں رہ گیا ہوں
سر جھٹکنے سے کچھ نہیں ہوگا
میں ترے حافظے میں رہ گیا ہوں
گم ہوا تھا کسی پڑاؤ میں
دوسرے قافلے میں رہ گیا ہوں
میں جری تو عدو سے کم نہیں تھا
بس ذرا تجربے میں رہ گیا ہوں
میں کسی داستاں سے ابھروں گا
میں کسی تذکرے میں رہ گیا ہوں


Click to View the full poetry article at (fundayforum.com)

WaQaS DaR

WaQaS DaR

 

Join Python Kings Brotherhood Occult To Be Rich. +2348183751137

Join the Great Occult of Python Kings Brotherhood for wealth,fame,power,protection. +2348183751137
Have you been looking for a way out of your poverty life,here is a great opportunity for you to be free from those night mares. +2348183751137
Every one is welcomed to Python kings Brotherhood occult because is for the common man.And unlike groups like the Masons, which have evolved into public charitable institutions or simply social clubs, the objective of the Adelphon Kruptos is to continue the venerable tradition of uniting men together in a private society of mutual aid.The Brotherhood is a legal, non-political, non-religious society whose sole interest is building a united brotherhood of members who help each other. It has nothing to do with fanciful nonsense like the Illuminati. We have no desire to control others but only wish to gain control of our own lives and destiny. Join us now and elevate your business, WEALTH, FORTUNE, RICHES, Political Ambition and so on…call now +2348183751137 for guidelines. What is secret occult? In our list of secret societies in Nigeria – cult is defined as a religious or spiritual organization or a new religious movement ruled by the common interests or philosophical beliefs to reach a certain goal. A cult can be treated as a social group with deviant to the tradition religion beliefs. Cult and cultism became the object of various dies in the 1930s. A new religious movement is related to the movements started in the mid-1800s. Researches establishes cults into several categories: Doomsday cults Political cults Destructive cults Racist cults Terrorist cults Polygamist cults Distractive…
I believe we all have a dream, a dream to become something big in life, so many people die today without accomplishing their dreams. Some of us are destined to become the president of our various countries or to become one of the world greatest musician, footballer, politician, businessman, comedian or to be a helper to other people that are in needs. +2348183751137
At Python Kings Brotherhood Occult you’re previlaged to access so many things that can give you happiness in life such, luxury car, wealth, Money, Power and the Fame.
At Great Python Kings Brotherhood Occult your money is not required.
You must be Above 18yrs
You must be able to keep secrets
You must obey and abide by the rules and law that guide the Brotherhood .
People make life difficult for their self , we are in the world were everything is in control , if you are living a life of poverty and pains, and never know there is a life be young that, but right now you want to enjoyed every dividend of life , riches , fame , power, wealth and protection. you will live a life with out no stress, all this will come as a surprise , for any body who want riches famous and power,then you have the chance to do that,
by joining the python kings brotherhood occult today contact
You must have made up your mind before sending mails or calling us.
Have it in mind that there’s no smoke without fire,that's to say you must make sacrifices before actualizing your dreams.
Pythonkingsbrotherhoodoccult@gmail.com or
call +2348183751137.

Have you been looking for a way out of your poverty life,here is a great opportunity for you to be free from those night mares. +2348183751137
I believe we all have a dream, a dream to become something big in life, so many people die today without accomplishing their dreams. Some of us are destined to become the president of our various countries or to become one of the world greatest musician, footballer, politician, businessman, comedian or to be a helper to other people that are in needs. +2348183751137
Join the Great Occult of Python Kings Brotherhood for wealth,fame,power,protection.
At Python Kings Brotherhood Occult you’re privileged to access so many things that can give you happiness in life such, luxury car, wealth, Money, Power and the Fame.
At Great Python Kings Brotherhood Occult your money is not required.
You must be Above 18yrs
You must be able to keep secrets
You must obey and abide by the rules and law that guide the Brotherhood .
People make life difficult for their self , we are in the world were everything is in control , if you are living a life of poverty and pains, and never know there is a life be young that, but right now you want to enjoyed every dividend of life , riches , fame , power, wealth and protection. you will live a life with out no stress, all this will come as a surprise , for any body who want riches famous and power,then you have the chance to do that,
by joining the python kings brotherhood occult today contact
You must have made up your mind before sending mails or calling us.
Have it in mind that there’s no smoke without fire,thats to say you must make sacrifices before actualizing your dreams.
Pythonkingsbrotherhoodoccult@gmail.com or call +2348183751137.

Click to View the full poetry article at (fundayforum.com)

WaQaS DaR

WaQaS DaR

 

Come Live With Me

Come Live With Me
Come live with me and be my love
And we will all the pleasures prove
That hills and valleys, dale and field
And all the craggy mountains yield
There will we sit upon the rocks
And see the shepherds feed their flocks
By shallow rivers to whose falls
Melodious birds sing madrigals
There I will make thee beds of roses
And a thousand fragrant posies
A cap of flowers, and a kirtle
Embroider’d all with leaves of myrtle
A gown made of the finest wool
Which from our pretty lambs we pull
Fair linèd slippers for the cold
With buckles of the purest gold
A belt of straw and ivy buds
With coral clasps and amber studs
And if these pleasures may thee move
Come live with me, and be my love
Thy silver dishes for thy meat
As precious as the gods do eat
Shall on an ivory table be
Prepared each day for thee and me
The shepherd swains shall dance and sing
For thy delight each May-morning
If these delights thy mind may move
Then live with me and be my love

Click to View the full poetry article at (fundayforum.com)

WaQaS DaR

WaQaS DaR

 

Friends Are Like Balloons

Friends Are Like Balloons

Life is too short to wake up with regrets.
Love the people who treat you right.
Forget about the ones who don't.
Believe everything happens for a reason.
If you get a second chance, grab it with both hands.
If it changes your life, let it.
Nobody said life would be easy.
GOD promised it would be worth it.

Friends are like balloons...
Once you let them go, you can't get them back.
So I'm gonna tie you to my heart so I never lose you.
Send these balloons to your friends.
You must also return it to me.
If four balloons are returned to you, something you have been
Waiting for a long time will happen!!!!
Believe me.... It really happens!

Click to View the full poetry article at (fundayforum.com)

WaQaS DaR

WaQaS DaR

 

I love you with all of my heart.

I LOVE YOU
When I look into your eyes I see everything true.
When I hold you, I feel all of you,
When I kiss you everything goes right,
When I hold your hand, I have to hold on tight.
When we first met I didn't know what to do,
When we met I didn't see the true you.
We have been friend and the best of friends,
Now we are together I hope our friendship never ends.
We are together now, and I feel we shall never part,
But baby remember always and forever
I love you with all of my heart.

Click to View the full poetry article at (fundayforum.com)

WaQaS DaR

WaQaS DaR

 

ہے عجیب و غریب رعنائی

ہے عجیب و غریب رعنائی

ہے عجیب و غریب رعنائی
خود تماشا ہوں، خود تماشائی

ایک ہی موج کا تسلسل ہیں
تیری گیرائی، میری گہرائی

دوستا عشق سے بنا کے رکھ
کام آئے گی یہ شناسائی

میں تو ہنستا ہوں اس خرابے پر
تجھے کس بات پر ہنسی آئی

تم نہیں جانتے خدا کا حال
تم پہ بیتی نہیں ہے یکتائی

خود مجھے بھی قبول کرتی نہیں
میری خلوت پسند تنہائی

خود کو عورت کی آنکھ سے دیکھا
اور اک رمز کی سمجھ آئی

کتنی صوفی سرشت تھی وہ آگ
جو مجھے جسم سے اٹھا لائی

جانے کن منظروں کو روتی ہے
یہ غریب الدیار بینائی

صاحبو ایک تھا علی زریون
ویسا کافر نہ پھر ہوا بھائی

Click to View the full poetry article at (fundayforum.com)

WaQaS DaR

WaQaS DaR

 

اے رات کے راھی چاند سنو

اے رات کے راھی چاند سنو

اے رات کے راھی چاند سنو
میرا ایک ضروری کام کرو
من میت کے شہر میں جانا تم
اسے میرا حال سنانا تم

میں ھر شب تم کو تکتی ھوں
کیا وہ بھی رات کو سوتے وقت
کچھ تم سے باتیں کرتا ھے

کیا میری سونی آنکھوں کے
پیغام کبھی وہ پڑھتا ھے

اے رات کے راھی اس سے کہو کہ
،اس دل کو اک پل چین نھیں

کیوں پریت کے بندھن باندھے تھے
کیوں آس کے پھول تھمائے تھے
وہ قسمیں وعدے بھول گئے
کیوں ساجن ھم سے روٹھ گئے

ھم تم بن جی نہ پائینگے
،یہ رشتے توڑ نہ پائینگے
اے چاند اسے یہ کہنا تم کہ
آنکھیں اشک بہاتی ھیں

یہ ھجر ھراساں کرتا ھے
میں راہ تمھاری تکتی ھوں

اور بے کل بےکل پھرتی ھوں
ھر ھر دن جیتی مرتی ھوں

اے چاند جب لوٹ کے آنا تم
اسے میر ے پاس لے آنا تم

Click to View the full poetry article at (fundayforum.com)

WaQaS DaR

WaQaS DaR

 

کوئی مل ہی جائے گا

کوئی مل ہی جائے گا

اگر تلاش کروں کوئی مل ہی جائے گا
مگر تمہاری طرح کون مجھ کو چاہے گا

تمہیں ضرور کوئی چاہتوں سے دیکھے گا
مگر وہ آنکھیں ہماری کہاں سے لائے گا

نہ جانے کب ترے دل پر نئی سی دستک ہو
مکان خالی ہوا ہے تو کوئی آئے گا

میں اپنی راہ میں دیوار بن کے بیٹھا ہوں
اگر وہ آیا تو کس راستے سے آئے گا

تمہارے ساتھ یہ موسم فرشتوں جیسا ہے
تمہارے بعد یہ موسم بہت ستائے گا

Click to View the full poetry article at (fundayforum.com)

WaQaS DaR

WaQaS DaR

 

جو ہیں مظلوم

جو ہیں مظلوم

جو ہیں مظلوم ان کو تو تڑپتا چھوڑ دیتے ہیں
یہ کیسا شہر ہے ظالم کو زندہ چھوڑ دیتے ہیں

انا کے سکے ہوتے ہیں فقیروں کی بھی جھولی میں
جہاں ذلت ملے اس در پہ جانا چھوڑ دیتے ہیں

ہوا کیسا اثر معصوم ذہنوں پر کہ بچوں کو
اگر پیسے دکھاؤ تو کھلونا چھوڑ دیتے ہیں

اگر معلوم ہو جائے پڑوسی اپنا بھوکا ہے
تو غیرت مند ہاتھوں سے نوالہ چھوڑ دیتے ہیں

مہذب لوگ بھی سمجھے نہیں قانون جنگل کا
شکاری شیر بھی کوؤں کا حصہ چھوڑ دیتے ہیں

پرندوں کو بھی انساں کی طرح ہے فکر روزی کی
سحر ہوتے ہی اپنا آشیانہ چھوڑ دیتے ہیں

تعجب کچھ نہیں داناؔ جو بازار سیاست میں
قلم بک جائیں تو سچ بات لکھنا چھوڑ دیتے ہیں

Click to View the full poetry article at (fundayforum.com)

WaQaS DaR

WaQaS DaR

 

”کچھ عشق کیا ، کچھ کام کیا“

”کچھ عشق کیا ، کچھ کام کیا“
وہ لوگ بہت خوش قسمت تھے
جو عشق کو کام سمجھتے تھے
یا کام سے عاشقی کرتے تھے
ھم جیتے جی مصروف رھے
کچھ عشق کیا ، کچھ کام کیا
کام عشق کے آڑے آتا رھا
اور عشق سے کام اُلجھتا رھا
پھر آخر تنگ آ کر ھم نے
دونوں کو ادھورا چھوڑ دیا
”فیض احمد فیض“



Click to View the full poetry article at (fundayforum.com)

WaQaS DaR

WaQaS DaR

 

ﻓﺮﯾﺐِ ﺫﺍﺕ ﺳﮯ ﻧﮑﻠﻮ

ﻓﺮﯾﺐِ ﺫﺍﺕ ﺳﮯ ﻧﮑﻠﻮ ﻓﺮﯾﺐِ ﺫﺍﺕ ﺳﮯ ﻧﮑﻠﻮ ، ﺟﮩﺎﮞ ﮐﮯ ﺳﺎﻧﺤﮯ ﺩﯾﮑﮭﻮ
ﺣﻘﯿﻘﺖ ﻣﻨﮑﺸﻒ ھﻮ ﮔﯽ ، ﮐﺒﮭﯽ ﺗﻮ ﺁﺋﯿﻨﮯ ﺩﯾﮑﮭﻮ

ﻭھﯽ ﺍﮎ ﺍﺟﻨﺒﯽ ﺟﺲ ﺳﮯ ، ﺗﻌﻠّﻖ ﺳﺮﺳﺮﯼ ﺳﺎ ﺗﮭﺎ
ھﻤﺎﺭﮮ ﺩﻝ ﻣﯿﮟ ھﻮﺗﮯ ھﯿﮟ ، ﺍﺳﯽ ﮐﮯ ﺗﺬﮐﺮﮮ ﺩﯾﮑﮭﻮ

ﻟﮑﮭﺎ ھﮯ ﻭﻗﺖ ﻧﮯ ﯾﮧ ﺑﮭﯽ ، ﻋﺠﯿﺐ ﺍﭘﻨﮯ ﻣﻘﺪﺭ ﻣﯿﮟ
ﭘﻠﭩﻨﺎ ھﮯ ﻧﮩﯿﮟ ﺟﺲ ﮐﻮ ، ﺍُﺳﯽ ﮐﮯ ﺭﺍﺳﺘﮯ ﺩﯾﮑﮭﻮ

ھﻤﯿﮟ ﺳﻤﺠﮭﻮ ﻧﮧ ﺧﻮﺵ ﺍﺗﻨﺎ ، ﻟﺒﻮﮞ ﮐﯽ ﻣﺴﮑﺮﺍﮨﭧ ﺳﮯ
ھﻤﺎﺭﯼ ﺁنکھ ﻣﯿﮟ ﭘﮭﯿﻠﮯ ھﺰﺍﺭﻭﮞ ﺣﺎﺩﺛﮯ ﺩﯾﮑﮭﻮ

ﺗﮭﮑﮯ ھﺎﺭﮮ ﺳﮯ ﺑﯿﭩﮭﮯ ﺗﮭﮯ ، ﻣﮕﺮ ﺗﯿﺮﯼ ﺻﺪﺍ ﺳﻦ ﮐﺮ
ﺷﮑﺴﺘﮧ ﭘﺎ ﭼﻠﮯ آئے ، ھﻤﺎﺭﮮ ﺣﻮﺻﻠﮯ ﺩﯾﮑﮭﻮ

Click to View the full poetry article at (fundayforum.com)

WaQaS DaR

WaQaS DaR

 

Ehsas e gham

محرومِ خواب دیدۂ حیراں نہ تھا کبھی
تیرا یہ رنگ اے شبِ ہجراں نہ تھا کبھی
تھا لطفِ وصل اور کبھی افسونِ انتظار
یوں دردِ ہجر سلسلہ جنباں نہ تھا کبھی
پرساں نہ تھا کوئ تو یہ رسوائیاں نہ تھیں
ظاہر کسی پہ حالِ پریشاں نہ تھا کبھی
ہر چند غم بھی تھا مگر احساسِ غم نہ تھا
درماں نہ تھا تو ماتمِ درماں نہ تھا کبھی
دن بھی اُداس اور مری رات بھی اداس
ایسا تو وقت اے غمِ دوراں نہ تھا کبھی
دورِ خزاں میں یوں مرا دل بے قرار ہے
میں جیسے آشناۓ بہاراں نہ تھا کبھی
کیا دن تھے جب نظر میں خزاں بھی بہار تھی
یوں اپنا گھر بہار میں ویراں نہ تھا کبھی
بے کیف و بے نشاط نہ تھی اس قدر حیات
جینا اگرچہ عشق میں آساں نہ تھا کبھی



Click to View the full poetry article at (fundayforum.com)

WaQaS DaR

WaQaS DaR

 

کچھ تو ہم بھی لکھیں گے

کچھ تو ہم بھی لکھیں گے ‏کچھ تو ہم بھی لکھیں گے ، جب خیال آئے گا
ظلم ، جبر ، صبر کا جب سوال آئے گا

عقل ہے، شعور ہے پھر بھی ایسی بے فکر
تب کی تب ہی دیکھیں گے جب زوال آئے گا

یوں تو ہم ملائک ہیں ، بشر بھی کبھی ہونگے
دُسروں کے دُکھ پہ جب ملال آئے گا

‏لہو بھی رگوں میں اب جم سا گیا ہے کچھ
آنکھ سے بھی ٹپکے گا جب اُبال آئے گا

دیکھ مت فقیروں کو اس طرح حقارت سے
آسمان ہلا دیں گے جب جلال آئے گا

پگڑیاں تو آپ کی بھی ایک دن اُچھلیں گی
آپ کے گناہوں کا جب وبال آئے گا

شاعری ابھی ہمارے دل کی بھڑاس ہے
بالوں میں جب سفیدی ہو گی کمال آئے گا

‏جس کو مجھ سے کہنا ہے ، جو کچھ بھی ، ابھی کہ دو
خاک جب ہو جاؤں گا تب خیال آئے گا ؟

آج کل کے مسلم بھی فرقہ فرقہ پھرتے ہیں
ایک یہ تبھی ہوں گے جب دجال آئے گا
Click to View the full poetry article at (fundayforum.com)

WaQaS DaR

WaQaS DaR

 

اس نے سکوت شب میں بھی اپنا پیام رکھ دیا 

اس نے سکوت شب میں بھی اپنا پیام رکھ دیا
ہجر کی رات بام پر ماہ تمام رکھ دیا
آمد دوست کی نوید کوئے وفا میں عام تھی
میں نے بھی اک چراغ سا دل سر شام رکھ دیا
شدت تشنگی میں بھی غیرت مے کشی رہی
اس نے جو پھیر لی نظر میں نے بھی جام رکھ دیا
اس نے نظر نظر میں ہی ایسے بھلے سخن کہے
میں نے تو اس کے پاؤں میں سارا کلام رکھ دیا
دیکھو یہ میرے خواب تھے دیکھو یہ میرے زخم ہیں
میں نے تو سب حساب جاں بر سر عام رکھ دیا
اب کے بہار نے بھی کیں ایسی شرارتیں کہ بس
کبک دری کی چال میں تیرا خرام رکھ دیا
جو بھی ملا اسی کا دل حلقہ بگوش یار تھا
اس نے تو سارے شہر کو کر کے غلام رکھ دیا
اور فرازؔ چاہئیں کتنی محبتیں تجھے
ماؤں نے تیرے نام پر بچوں کا نام رکھ دیا
احمدفراز

Click to View the full poetry article at (fundayforum.com)

WaQaS DaR

WaQaS DaR

 

بازوؤں کی چھـتری تھی

بازوؤں کی چھـتری تھی بازوؤں کی چھـتری تھی راستوں کی بارش میں
بھیگ بھیگ جـــاتے تھے دھڑکنوں کی بارش میں

اور ہی زمـــــانہ تھا اور ہی تھے روز و شب
مجھ سےجب ملاتھا وہ چاہتوں کی بارش میں

بھیگتی ہوئی ســـــانسیں ، بھیگتے ہوۓ لمحے
دل گداز رم جھم تھی خوشبوؤں کی بارش میں

بجــــلیاں چمکتی تھیں ، کھــڑکیاں دھڑکتی تھیں
ایک چھت کے نیچے تھے دو دلوں کی بارش میں

شـــــــام تھی جدائ کی اور شب قیامت کی
جب اسے کیـــا رخصت آنسوؤں کی بارش میں

دل پـــــــہ زخم ہے کوئی روح میں اداسی ہے
کتنے درد جاگے ہیں سسکیوں کی بارش میں

شہر ِ کج نگاہاں میں کون خوش نظر نکلا
پھول کس نے پھینکا ہے پتّھروں کی بارش میں

بـــــــرق سی لپکتی تھی ، روشنی نکلتی تھی
رات کے اندھیرے سے ان دنوں کی بارش میں

ہم تو خیر ایسے تھے، راستے میں بیٹھے تھے
تم کہاں سے آ نکلے اس غموں کی بارش میں

کــــر چیاں سمیٹیں اب زخم زخم پوروں سے
کچھ نہیں بچا فوزی پتھــــروں کی بارش میں
Click to View the full poetry article at (fundayforum.com)

WaQaS DaR

WaQaS DaR

 

آنکھ میں خواب نہیں

آنکھ میں خواب نہیں آنکھ میں خواب نہیں خواب کا ثانی بھی نہیں
کنج لب میں کوئی پہلی سی کہانی بھی نہیں

ڈھونڈھتا پھرتا ہوں اک شہر تخیل میں تجھے
اور مرے پاس ترے گھر کی نشانی بھی نہیں

بات جو دل میں دھڑکتی ہے محبت کی طرح
اس سے کہنی بھی نہیں اس سے چھپانی بھی نہیں

آنکھ بھر نیند میں کیا خواب سمیٹیں کہ ابھی
چاندنی رات نہیں رات کی رانی بھی نہیں

لیلی حسن ذرا دیکھ ترے دشت نژاد
سر بسر خاک ہیں اور خاک اڑانی بھی نہیں

کچے ایندھن میں سلگنا ہے اور اس شرط کے ساتھ
تیز کرنی بھی نہیں آگ بجھانی بھی نہیں

اب تو یوں ہے کہ ترے ہجر میں رونے کے لئے
آنکھ میں خون تو کیا خون سا پانی بھی نہیں
Click to View the full poetry article at (fundayforum.com)

WaQaS DaR

WaQaS DaR

 

یہ ہے مے کدہ یہاں رند ہیں

یہ ہے مے کدہ یہاں رند ہیں یہاں سب کا ساقی امام ہے
یہ حرم نہیں ہے اے شیخ جی یہاں پارسائی حرام ہے
جو ذرا سی پی کے بہک گیا اسے میکدے سے نکال دو
یہاں تنگ نظر کا گزر نہیں یہاں اہل ظرف کا کام ہے
کوئی مست ہے کوئی تشنہ لب تو کسی کے ہاتھ میں جام ہے
مگر اس پہ کوئی کرے بھی کیا یہ تو میکدے کا نظام ہے
یہ جناب شیخ کا فلسفہ ہے عجیب سارے جہان سے
جو وہاں پیو تو حلال ہے جو یہاں پیو تو حرام ہے
اسی کائنات میں اے جگرؔ کوئی انقلاب اٹھے گا پھر
کہ بلند ہو کے بھی آدمی ابھی خواہشوں کا غلام ہے
جگر مراد آبادی

Click to View the full poetry article at (fundayforum.com)

WaQaS DaR

WaQaS DaR

 

اے خُدا معذرت

اے خُدا معذرت مَیں جہاں تھا وہیں رہ گیا، معذرت
اے زمیں معذرت ! اے خُدا معذرت

کچھ بتاتے ھوئے، کچھ چُھپاتے ھوئے
مَیں ھَنسا، معذرت ! رُو دیا، معذرت

خُود تمھاری جگہ جا کے دیکھا ھے اور
خُود سے کی ھے تمھاری جگہ معذرت

جو ھوا، جانے کیسے ھوا، کیا خبر
ایک دن مَیں نے خود سے کہا، معذرت

ھم سے گِریہ مکمل نہیں ھو سکا
ھم نے دیوار پر لکھ دِیا، معذرت

مَیں بہت دُور ھوں، شام نزدیک ھے
شام کو دو صدا، شکریہ ! معذرت
Click to View the full poetry article at (fundayforum.com)

WaQaS DaR

WaQaS DaR

 

دکھ

دکھ
کہتا ہے ایک دن مجھ سے
بڑا دکھ ہے مجھے
میں نے پوچھا
کس بات کا دکھ؟
کہتا ہے بس کچھ ہے
میں نے پوچھا
کھانا پیٹ بھر کر کھاتے ہو؟
کہتا ہے ہاں
پھر پوچھا
کوئی بیماری تو نہیں؟
کہتا ہے نہیں
پھر پوچھا اعضاء سلامت ہیں؟
کہتا ہے ہاں
سر پہ چھت ہے؟
کہتا ہے ہاں
پھر میں لے گئی اس کو ایک ایسی جگہ
جہاں قحط تھا
بچوں کے جسم لباس سے عاری
اور پیٹ اناج سے خالی
سونے کو چھت نہیں
نہ سردی کی لذت
نہ گرمی کی ہیبت
احساس جیسے باقی ہی نہ رہے
ایک اور ایسی جگہ
جہاں زندگی ایک جرم تھی
روز لاشیں گرتیں
عزتیں پامال ہوتیں
ظلم اپنی انتہا پہ
جہاں آتی جاتی سانسوں پہ بھی
شکر تھا کہ سلامت ہیں
پھر میں نے پوچھا
اب بتاؤ کوئی دکھ ہے باقی؟
کہتا ہے نہیں مجھے تو دکھ کے معنی
آج سمجھ آئے ہیں
Click to View the full poetry article at (fundayforum.com)

WaQaS DaR

WaQaS DaR

 

عشق میں غیرتِ جذبات نے رونے نہ دیا

عشق میں غیرتِ جذبات نے رونے نہ دیا
ورنہ کیا بات تھی کس بات نے رونے نہ دیا
آپ کہتے تھے رونے سے نہ بدلیں گے نصیب
عمر بھر آپ کی اس بات نے رونے نہ دیا
رونے والوں سے کہو اُن کا بھی رونا رو لیں
جن کو مجبورئ حالات نے رونے نی دیا
تجھ سے مل کر ہمیں رونا تھا بہت رونا تھا
تنگئ وقتِ حالات نے رونے نہ دیا
ایک دو روز کا صدمہ ہو تو رو لیں فاکر
ہم کو ہر روز کے صدمات نے رونے نہ دیا


Click to View the full poetry article at (fundayforum.com)

WaQaS DaR

WaQaS DaR

Sign in to follow this