Sign in to follow this  
Followers 0
  • entries
    192
  • comments
    2
  • views
    5,833

About this blog

Urdu shairy ki duniya. This blog has RSS of latest shairy o shairy topics from fundayforum.com.

If you are poetry lover please share here your fav poetry in comments. 

( Fundayforum.com)

fdwatermarkfd.png

Entries in this blog

WaQaS DaR

نہ میں خواب گر نہ میں کوزہ گر میری منزلیں کہیں اور ھیں مجھے اس جہاں کی تلاش ھے جہاں ھجر روح وصال ھے ابھی در وہ مجھ پہ کھلا نہیں ابھی آگ میں ھوں میں جل رھا ابھی اسکا عرفاں ھوا نہیں مجھے رقص رومی ملا نہیں ابھی ساز روح بجا نہیں رہ سرمدی کا خیال ھے میں ازل سے جسکا ھوں منتظر مجھے اس ابد کی تلاش ھے نہ میں گیت ھوں نہ میں خواب ھوں نہ سوال ھوں نہ جواب ھوں نہ عذاب ھوں نہ ثواب ھوں میں مکاں میں ھوں اک لا مکاں میں ھوں بے نشان کا اک نشاں میری اک لگن میری زندگی میری زندگی میری بندگی میرے من میں ایک ھی آگ ھے مجھے رقص رومی کی لاگ ھے میرا مست کتنا یہ راگ ھے کہ بلند میرا یہ بھاگ ھے نہ میں خواب گر، نہ میں کوزہ گر


Click to View the full poetry article at (fundayforum.com)

WaQaS DaR

اپنے تن دی خبر نہیں سجن دی خبر لوےکون؟ نہ میں خاکی نہ میں آتِش نہ پانی نہ پاوُن اپنے تن دی خبر نہیں سجن دی خبر لوےکون؟ نہ میں خاکی نہ میں آتِش نہ پانی نہ پاوُن وے بُهلیاں سائیاں وے گُهٹ گُهٹ روئیاں ِ وے بُهلیاں سائیاں وے گُهٹ گُهٹ روئیاں جِنوں آٹے وِچ لون ، جِنوں آٹے وِچ لون اپنے تن دی خبر نہیں سجن دی خبر لوےکون؟ اساں نازک دل دے لوک آں ساڈا دل نہ یار دُکهایاکر نہ چهوٹے وعدے کیتا کر نہ چهوٹی کسماں کهایا کر تینوں کینی واری آکهیاں اے سانو اَل وَل نہ آزمایہ کر تیرے پیار دے وچ میں مر جاسا مینوں اینا یاد نہ آیا کر سجنہ وے آ جا وے مُڑچهیتی نئ اُڈیکاں تیریاں دُبدہ پهرے گا فیرلبنیاں تینوں مٹی دییاں ڈیهریاں سجنہ وے آ جا وے مُڑچهیتی نئ اُڈیکاں تیریاں دُبدہ پهرے گا فیرلبنیاں تینوں مٹی دییاں ڈیهریاں اپنے تن دی خبر نہیں سجن دی خبر لوےکون؟ نہ میں خاکی نہ میں آتِش نہ پانی نہ پاوُن اپنے تن دی خبر نہیں سجن دی خبر لوےکون؟ نہ میں خاکی نہ میں آتِش نہ پانی نہ پاوُن وے بُهلیاں سائیاں وے گُهٹ گُهٹ روئیاں وے بُهلیاں سائیاں وے گُهٹ گُهٹ روئیاں جِنوں آٹے وِچ لون ، جِنوں آٹے وِچ لون اپنے تن دی خبر نہیں سجن دی خبر لوےکون؟


Click to View the full poetry article at (fundayforum.com)

WaQaS DaR

غیر کے چاک گریباں کو بھی ٹانکا کیجے اور کچھ اپنے گریباں میں بھی جھانکا کیجے بن کے منصف جو کٹہروں میں بلائیں سب کو اس ترازو میں ذرا خود کو بھی جانچا کیجے خود میں دعویٰ جو بڑائی کا لئے پھرتے ہیں یہ بھی فتنہ ہے ذرا اس کو بھی چلتا کیجے سب کو دیتے ہیں سبق آپ بھلے کاموں کا پہلے اس فن میں ذرا خود کو تو یکتا کیجے راستی پر ہیں فقط آپ غلط ہیں سارے اس تعصب میں حقیقت کو نہ دھندلا کیجے ہے توقع کہ محبت سے سبھی پیش آئیں خود محبت سے کوئی ایک تو اپنا کیجے اور کے نقص پہ جو اُگلے زباں تیری زہر اپنے حصے کا ذرا زہر بھی پھانکا کیجے برہمی ٹھیک ہے جاہل کی جہالت پہ مگر علم حاضر ہے ذرا خود کو تو بینا کیجے کاہے ابرک ہے گلہ رات کی تاریکی کا آپ کا کام ہے لفظوں سے اجالا کیجے اتباف ابرک


Click to View the full poetry article at (fundayforum.com)

WaQaS DaR

ﺑﺎﺭﺷﻮﮞ ﮐﮯ ﻣﻮﺳﻢ ﻣﯿﮟ ﻭﻩ ﺟﻮ ﺍﭘﻨﮯ ﮐﻤﺮﮮ ﮐﯽ ﮐﮭﮍﮐﯿﻮﮞ ﮐﻮ ﺑﻨﺪ ﮐﺮ ﮐﮯ ﺑﺎﺩﻟﻮﮞ ﮐﮯ ﺟﺎﻧﮯ ﮐﺎ ﺍﻧﺘﻈﺎﺭ ﮐﺮﺗﮯ ﮬﯿﮟ ﻭﻩ ﺑﮭﯽ ﺍﮎ ﺯﻣﺎﻧﮯ ﻣﯿﮟ ﺑﺎﺭﺷﻮﮞ ﮐﯽ ﺑﻮﻧﺪﻭﮞ ﺳﮯ ﮐﮭﯿﻠﺘﮯ ﺭﮬﮯ ﮬﻮﮞ ﮔﮯ ﭼﻮﺩﮬﻮﯾﮟ ﮐﯽ ﺭﺍﺗﻮﮞ ﻣﯿﮟ ﺟﻠﺪ ﺳﻮﻧﮯ ﻭﺍﻟﻮﮞ ﮐﯽ ﭼﺎﻧﺪﻧﯽ ﺳﮯ ﻣﺎﺿﯽ ﻣﯿﮟ ﺩﻭﺳﺘﯽ ﺭﮬﯽ ﮬﻮ ﮔﯽ ﺣﺴﻦ ﻭ ﻋﺸﻖ ﮐﯽ ﺑﺎﺗﯿﮟ ﺁﺝ ﻭﺍﺳﻄﮯ ﺟﻦ ﮐﮯ ﮐﭽﮫ ﻭﻗﻌﺖ ﻧﮭﯿﮟ ﺭﮐﮭﺘﯽ ﺑﮭﻮﻟﮯ ﺑﺴﺮﮮ ﻟﻤﺤﻮﮞ ﻣﯿﮟ ﭨﻮﭦ ﮐﺮ ﮐﺴﯽ ﮐﻮ ﻭﻩ ﭼﺎﮬﺘﮯ ﺭﮬﮯ ﮬﻮﮞ ﮔﮯ ﻭﻩ ﺟﻮ ﺍﭘﻨﮯ ﻏﻢ ﭘﺮ ﺑﮭﯽ ﺁﻧﮑﮫ ﻧﻢ ﻧﮭﯿﮟ ﮐﺮﺗﮯ ﮐﻞ ﮐﺴﯽ ﮐﯽ ﺧﺎﻃﺮ ﻭﻩ ﺧﻮﺏ ﺭﻭ ﭼﮑﮯ ﮬﻮﮞ ﮔﮯ ﺩﺭﺩ ﺁﺷﻨﺎ ﮬﻮ ﮐﺮ ...ﺍﺷﮏ ﮐﮭﻮ ﭼﮑﮯ ﮬﻮﮞ ﮔﮯ www.fundayforum.com


Click to View the full poetry article at (fundayforum.com)

WaQaS DaR

بڑے انجان موسم میں بہت بے رنگ لمحوں میں بنا آہٹ بنا دستک بہت معصوم سا سپنا اُتَر آیا ھے آنکھوں میں بنا سوچے بنا سمجھے کہا ہے دل نے چپکے سے ہاں اس معصوم سپنے کو آنکھوں میں جگہ دے دو بنا روکے, بنا بولے جھکا دیا ھے سر ہم نے مگر تعبیر کیا ہوگی...؟ یہ ہم جانے نا دل جانے بس معلوم ھے اتنا کہ دل کے فیصلے اکثر " ہمیں کم راس آئے ہیں" www.fundayforum.com


Click to View the full poetry article at (fundayforum.com)

WaQaS DaR

! پھڑ ونجھلی بدل تقدیر رانجھنا ! تیری ونجھلی تے لگی ہوئی ہیر رانجھنا تیری اک ذات نال وسدا جہان اے تن من کیتا اساں تیتھوں قربان اے ! سچے پیار دے گواہ پنج پیر رانجھنا ! تیری ونجھلی تے لگی ہوئی ہیر رانجھنا اکھاں تینوں ویکھیا تے ہو گیاں تیریاں میریاں تے سانہواں ہن رہیاں نہیں میریاں ! وِسے من وچ تیری تصویر رانجھنا ! تیری ونجھلی تے لگی ہوئی ہیر رانجھنا بھلا ہووے رانجھنا بختاں دے تارے دا راہ جہنے دسیا اے تخت ہزارے دا ! میری جند جان تیری جاگیر رانجھنا ! تیری ونجھلی تے لگی ہوئی ہیر رانجھا مجھیاں دا چاک نئیں توں جگ تیرا چاک اے دنیا دا روپ تیرے جوڑیاں دی خاک اے ! تیرے جوڑیاں اچ ہووے گی اخیر رانجھنا ! تیری ونجھلی تے لگی ہوئی ہیر رانجھنا کیدو بھانویں دیندا رہوے پہرا ساڈے پیار دا سنگ تیرا ہووے تے کی خوف اے سنسار دا ! وے میں رسماں دی توڑاں گی زنجیر رانجھنا ! تیری ونجھلی تے لگی ہوئی ہیر رانجھنا بنا ساقی جس طرح میخانیاں دے حال نیں تیرے بنا بیلے دیاں رونقاں محال نیں ! مر جاواں جے میں بدلاں ضمیر رانجھنا ! تیری ونجھلی تے لگی ہوئی ہیر رانجھنا [gallery640x480] [photo=data:image/jpeg;base64,/9j/4AAQSkZJRgABAQAAAQABAAD/2wCEAAkGBxMSEhISExIVFRUVFxUVFRUVFRUVFRUVFRcXGBUVFRUYHSggGBolHRUVITEhJSkrLi4uFx8zODMtNygtLisBCgoKDg0OGxAQGy0lHyUtLS0tLS0tLS0tLS0tLS0tLS0tLS0tLS0tLS0tLS0tLS0tLS0tLS0tLS0tLS0tLS0tLf/AABEIAKsBJgMBEQACEQEDEQH/xAAcAAABBQEBAQAAAAAAAAAAAAAEAQIDBQYABwj/xAA8EAABAwIEAwUGBQQBBAMAAAABAAIDBBEFEiExBkFREyJhcYEyQpGhscEHFCPR8FJicuGCFiQzQ5Kisv/EABsBAAIDAQEBAAAAAAAAAAAAAAMEAQIFAAYH/8QAMxEAAgICAgEDBAECBQMFAAAAAAECEQMhBBIxEyJBBTJRYXFCgSMzkaHwFNHhFVKxwfH/2gAMAwEAAhEDEQA/ANW5i+bJbPTJiOCmbLWJbmqq2UlIiemoorYmRFSK9gVo7y75DPwRvOqktEheFwaI1o1UrZ3wERsRVEVyTRKI0RRFZZCaKNHglQpkk7tCT0ltlE8X4GOPm/IHO6Ngu57QPEhdDi5JfamNvk44+WAs4logcrpwPHK63xsnIfTs9biJ5Obiu4vZFJxBQk2bUxE+JsPiUOXAzR/pYzi5+N+WSw2k1Y5pHVpBHyQpY3j1JDKyxltM4wEFV7E2SbIUthMTu0R59VZR0S5bOqYsw0RcU+r2I8vD3jaAQ226fU7MVwcXsRxREBdsarlaOVoIqMkHyTWNUgM3ZMxQ/IFEoKq0XFC4oxbrjkPaVxagqnaqTZyWx9RUCxAQlH5GYorqiosLBFjD5CdQF9QikVYJJJdWSOUdg0tRyCkL0R6wwAr541ZvWRlqqo/kiUrIXIkIlGxlkzGJ3Y5xVjkCOFrqgdPRGGKSykRyMVqDRehYYleEdlMk1VIJjamIozssthEMV0eMLE5zoZjGIw0cRlmcB/SCdXHoBzTmDjvJKkhbJmaR5djXF9TVXLSWM91re7p4k6rfwcLHjXjYlPLJumzKVtVORq51vNMSgkvai0GmVRkO9ylu0lsNSHh990eORS1Iq1XgIw/E5ad2aKRzD4HQ+Y2KXzY4S9slaCwnKO4uj0Thzjpk2SKoGR5sO0HsOPK491ZHK+mNJzx7X4NHBzU/bPya6aNZNGrjYDUVUcftyMb/AJOARoY3LwgWTOoyIqfiGlzZO2B/xBI+KifHyxV9SVyYPwyZ08EpPZy38gCfguhmnjXviJZsbm/ayN1Af6wR5EFMLmwa8CL4k72yOenLddx1R+Pnjm18g82F49/BCHJ2MGvIs5L4EOqOtAZEjVRgx4KqW+CQLihy4lCRO1UML1C45LAqr2WUQCqmsFKQ1CIA+VXJoHkfoVyJ66A3SFTYXqkNiFyVdAJyo9eavn7WzdsQonW9AexE5GjgaZV5NERKK0cmRFyEw0SMNVaDN0OKhEWVmLUkhb2rHEFmtvLW/itn6ZPC36WSN2ZX1VZo1mxyevJHh3ELHANkGV17EjY+Pgi5vpssbfTwTg+oLNH3fcXwhvqNQlYwovOQJxNjbMPpzKRme45Y2Xtmd4+A3Kf4vGeWXVePkQySPDsYxmWeUzTOzyHYH2IweTW8l6THjhhVRQu7l/AHJVvIuXFEnKlbIUFYM6VztyT6oKk5F6SGhc7qiRBbmPsqKEfk52Pp4XPOVrS4+AvZVUmtI5tLbNngfCrQGvn9rcMvYeqJ3fgSy591E1NVib+yLB5Zudumv1WLyeJCM+y8Gtw+fleLo3tfJh8Ue4HVwHgTc/ABFxpfCInJ/LKZ7/Eo9Au34Fp5HMIcHOB5EEhRKKlpohSadpmxwLi+XRkgEg2vs+3nzWbn+nx+6Gh7Fy71M1zJRILt1HMHceYWf0cZb0xp0/2gSqp7ajT6eo+6ewc6eN9cm1/uKZuFDIrhpjG3Fri30PkVqQyQyK4O0Y2WE8bqSokXFEzg5QSTNK46htU+wV4qyYbYLBOunEbjFMIlqLWQgsMdldUz3XXQzGNAzpFKKSpEY1UpFXJI78ubXV4oFkzrwFUFCS2553VZZVF0KzuW0elheGrZ6RvQ8hN4oW7FpypEDwm6AqVohIQpoPBkZQnAMpEROqjwEWx9kH5CI6qeGwyE6d130TvCjeaK/YpzpVgl/B54ynJ5leu7WzzHSlstMJxGWB4IcSObTsR5IOTBCflBocmcV+TNfiLjL5pi52nKNvJkfIebjck+ACb4uJY40i6yeptGGvrdEW5WF+KFJupfvds7wdZWarZFkkUDn2DQXdAAqyqts5yS8mgw/hR1u0qHdmzp7xQZNPyBln+IbLzDi1v6dNF5uI18z09VRS/AGa+Zssy5sYOZ2d53t9L9FLaQJRc3+gSokIjcSOV7fulsrtD+BKLMm9mZ2vwAVboPVhkeGWFz9P3VHMsoAFeCNAB67q8CkmB0zST0RgVmhwzHpISA7vDl1t0ugZuNHIguLPKDNtTVwkYHjVrh/AfFY2SDjLo/g1oyUkpL5I43B12Hbdp5j/SHhzvBPsvHyRyuOs8P2I67TY/zxXoITjkj2ieblCWObUji4KepahHyqygSgSaQlHhGkXQ2Ny6SsItBB1CWktjCmDviVVH5Onm3Q3sVdAnKw3D6C+6X5HJWNaJjByYZ+SubJFc2lZefHQcyAAADYIUckptspOopI04CxXE1u2qJXDRNYkAyMgLUxQGyGRqrKNhYTryNMSnpon1Ng8jbFK5IDeOaaE7RC6hrB8UoTO1rQ7KAQTputDhZVgk5NWIc3H60VFOhKHh6JpF3F3hstD/1Gb+1CMuDjr3NsoeLaUUsrbXLJBcdWkb68wtHjZvVjb8ozsuJwk4oyGLwNqgMt8w0DgNPIpxTrR2NuHkz2J4JJBlzEHNoMu9+lkWLTGI5VLwE4dw7LIRaMtH9T9APRd2igU81fJbycPU8Wssj5XD3W2a1CnMrHJKWo6Joq9rP/DCxnQ+074lLes26SCehe5yI5HPkdeUm382XW27Z1KK9gfDNcZW3a3+0b+ZVu/wgfp/L2wlrGt+5P3KqXSC6LCn1ILQC1j8rRKR3LucBob6/MapbNlitIbwYpN20bqh4LpImtYIw5wHekdqSeZQG2xuMaIa3g+nPukHkbm3wVezRfqmYPifg2QBz2nMB0He+ARceb4YDLx29o8+niLSQbg/BOJ2KONDzU6ZXd4ddiPJT13Z1/Bq+BawEmnc/Q3cy/XmFnfUMLa9SPkf4WRV0f9jQ1URabjcbrJdM0ofgR8meO/NnzbyPonvp+bpP034fj+TM+pcdtepHyDRSLdaMtLRz5NURR0TRC9ytRZIWNVkWYYNkukS3qhllxUnggvqk8/IUNBoY72WNOLBY2fL2Y3GHUIjQo7IyMe8rQwR0ZebJs02XVZPWzZskIR4qijdkRaipgmhzWK5UZIxTRyYI6IlCcLDRy0MNMq+iFXIRLk5IqgAcyWGG2vNEWNIpLK2jC/iHM11Q1j8+VjBYNboS466/BbPCiljbM/kt99FCypLRaOJ1hzOgTVWB38kWRziHubmcNuguocq8FlGzpTMdAT5DT5oLlNhYwxoY3Cnu1cQPW5Vak/LLd4rwiSGmbFq9zB5lXhjdlZzvSIqrGaaPXMHu6N1+ewRlhl8lVFsrP+oppXZYmtYPHXfqr+lFK2XUKPTsJ4ViY1j5iZn2B7/sg9QwaLCz8iTk0mbfHwwUVSNLRWJtYWaNrXHhp5rN5mSUcdoM0vATDWOD2MPvtc6x3FiNPW5+CvweTKa6yBZMfyiecEglPuyqorXm17odhKMLx1wwyRhmhADh7TRz8R4pnDmp0wGfj2rR5RPpp0WitoznEjpqpzHBzSQQbgqZRTVMlado9RwjFfzMDZiLObZjx16OXnuTiWLJ1XybWGTnCyYuyEPbts4cvEeSXS/8BqUk0waviy2c3VjtvA/0lek+nclZ49Zakv8AcxeRxvSlrwQB2i0WhWrObqqMmgiJqDNkBKGjhiqypbUcN2rD5kveO4ZKqCmxgLO8sYlOkOATGOAnlyasY9y1MMNGNlybNg1qx4o9G2Nyq5FjbK8UUbH5bItUCYx66jrIgrRVlWxTYItIrZHm8FUtYrXXNl1WdaRnePadrexl2Juxx6/0/dafD8dRLNK9mPqJbMc61wASU4ogXLtoys2OTsAsRrsCLm3JHWGPyMRS8E+C1NbWzxwRPDC875WhrWjdx56WQckYwi5PwHhjUpKK8m0xj8NJjGXQ1ssjxyf3GOPQWOizF9Sp+Nfk0H9PVaezzHFKSop5HRTNexwNiDz8Qea0sfI7q4sRli6vaGU9DLJs068ymkpME5xiXeAYd2lTDTxkO7wMhGoFjtf+bJXlZVCFILx4SnK2j3t1PYelgvNO3tm8qSobh1MbPd00/f7K0YKcWmCyS2qGUMV5LuNyNemuwJ6mxPx8lXj4IY5aKTbaAMe4heX9jAMrW+3IR/8AkFMvKvCKxxN7BqypY2MF3aa+88uAN+djYfBVlb8INGH5ZXUB7dxax1wNTrdAqV7GvbRneKOBmvcXxuDXcxyJTeHmSx6l4Fc3Cjk2tMwE+CSMkyEX8vmn48qEo9hR8CalRreF6gMcY3aDRpPKxGx9VncqPdWaEYdFSNCIbOdG7y/YpDbX7L+HaGQx+1G7Y6HwPIrseeWKayR8onNiWSFMqZIy1xa7cGy9fDLHJBTj4Z5+cHFtMnjChsEwiJuiVyZEnR3VsIjbdDc9ENUHx0g0WHl583JpM04caPVNhwAA0S/qOa2AcUpaOKpHydk+0aSn00jLlbRBKVrcaHttmFzM1SpG6jasCJ7Jk35fRFUbKdiEx2KJGNFHIc9iJRRsDmPVR1O7DYIyb6HRXhFlJSJnw6BF6lOw2SNc4lFISOMBWjjohzcin42iBpbn3XNI801xfvA5X7TzbEn3pJLbm7fnZPR2RFVNGKxCpz5T4D6Jhy0NQjTNv+DNP2lTJ1ZESPVyz/qErwqP7HeIksvY9dpZXlzQRZrSf+TuZ/nRecuXZL4NqUYpN/LMD+KVDLW1tNSRgABmcusNyddfAfVavFlGEXNmZyIuUlFBWHfhNAB+tUTOFh3GuDW+Nza5Vpc7JVI6PDj5Zoo8GpaFg7CJsfLP7R8yTuVm8jNN7bH8GKKWgN9GKh4YZXlztu9a3kPn6JeCm5qzsij1sioY5KX8zDFOQ2OVubP+pI90jGEWuNByA8093cVuv7AFDs9FvhlZaRrJHMzusLZmZv8AkwHRd1emy3tppFTikbvzMrGAZgbsB2LgLgHwuEGP+Y0F/oTBOJOHDVviDGzktH6vagHO4n2gb2aPAAJyeWtRQtDHu5vRoqHBW0cAYLZrakC3ogTTq2MY5JukUuIoA7FmPxCiu/N0VlNxVEyW7KWleGPcQL3zX8NLJqScoqykUrZb0XEXbuyyWDmgNY629vdd6WsfBCzcZxXZAU0n1LuPvC/vDQrMyad/Be60R11GJAHDR7Rb/IeKf4PPeH2S+3/4FOTxvU90fJWtYdra9FvSzwSu9GP6crr5LSmjGUaLDz55PJTY9ixx6WEU0eqL6nSDbE8ke8kkWBFrLEjFztofy5FBJMVEitC78iPNkWEW2DyyUVsgE3tFOLG20jPnkiotjHHmtzjr2UeX5f8AmG/bsvMnu5B9KUxADIKdSNdqN00kgTK+op3NOylxK9iFlHmOqsoFZSD5bBtkYFZWStuoasiyNzV3XZFkXNSSUPG8h7JkY94kn0H+0zxo7bAZ5bSPOJm3pHjneT43KNB0v7sP5yHnwOyLF72Nm0/CavdDXsLWFzXtcx5Hug2s8+ANkpznH0xnixbme6BozlwIIPTa/VYLVuzWv20QPoR+YbUX1Ebo7eDnNN//AKoilqgajuwwyKbJohmAcLEXB3Q5fsJEp8A4fZBUGRskpAJLWF12jMDcW9VfHkfZJ/APJBVZU8d0ZbXZgXNZPGwuymx7hyuseRsGm/ip5EumyeKu0JRLGbhd8k8E9o2mINs5l2ghu3cvYE6XIRPUnOvwBjCELXyS8RAMqRJtfL8UDJqdjGJNwo1dBKHRNII23CdhtWJT0wDGbEWVMiDYXRlq6P4JRodjL5M/iMNrlUkFu2YqIZpnMF+9cafFaPjGmwKl7mQYxhMtHJE9xuyTvNcNiOYPQpiE45YNISm5QnbNnRTOLWyN10ANvkViZodZOLHG+ytFxE/ONNxuPukJLo9+CqmMNMCb216q6zziut6KTxxb7Pyd4DVFxKvdIVyZNVEnp2W1KJmyd11iL4odX2kQVk+Y6clpfTuK8acp/Ji/VeV6slCHwSsrWgaoebhq7iw/G5E3GnEDmrcx8N0xjwRWkRk71cxjZtEzjw+62ZPIm0qJWyaJ+MOpiZMnZnpAGgXlKPocg+mGyYggEi1p49E9ix9mVoWpYLaomSCi6KZForpJOipYu9AdRIrIqDEqyRxBUSgBSQCGotuqN0cZ3imbNIwcg36nVOcb7QGZe4xk7cvbNOwdm/4utf7rp/NDGN31Ze0f4TwOf2zZc0L2hzG22v481m5OZkS6pb/JtYsEX7mzcYBw5T0TMsMYBPtOOrneZ+yWlKU9ydjaSjpBMrrOt1GiE9MKtilSSKFJA0hUky8QIYmIZCCA4u2AcARl3QVyHibbWjpxjJJJ7M1x3jzZnRNawh0RcC64sQbXaLeXyRllWeNtE8fC4N2anhDFBNTtF+8zuu9Nvkjcd66/gDyYOMrRS8d1zA9hHetuG/foh5qlNJBuMqhsG4SmmAkdmIaXXDeQ05K2O/g7Kot0ad04ljufaCYUlKIso0ymqOYS0vIwtGSxyos11uQPxQl7ppDEV7bMZhkz45Q8AE3NwdjfQhamTq4UBjBuVFjxDK+dsbCO5EO60aht99d0HjtQbf5CcjiuUdIl4axR1P3ZG5mE2IuNvD5ruRihl2vIpHDmhG2tGofK1pbJGbtdt9wfFZM4eYSOp+SxY4EBzdj8kk006ZdbQhAGy6L2BmkvBDVGwWt9OSlN2ZH1NuGNUVrnaFbWaXWJmcHB3yoCL9VnQbez2OXFGKpIkYU1CVGRyMKe2TQt1v0WjhV7PKfUZqP+Gv7k7XJgwz1b8uRovK9D6M2FRixRo6YKRbUw0Wngi6KnTM0UZMbjtlZKynlbuUFC7QAdSroiiGd2oaASTsACSfRTTfwVkCz0U4JvC/ToL/C26t0l+CHGS+CSn4dnmILv0m23dYu9Gjn5q8cLfkhY8knrS/JRceYMKYwFuZzHXaXONyXbm5TEI9SMmNRpIxdawBwdyIyu+ymS+SuN6o2X4aYgXQy07jrA+zevZv1b87rJ5MOsjd4c+0KNYUqx4q8dJa1rhyKDl0rLIbQVwkbYnvdFEJp6LWHZbIj0SvJksexCqkzinaGRM9qVxtmtvlA1sPsuxqL8lZpv2ozmHBry6oJeeyBa1x0a9zyQbczvf1XZ2+vpqtlMPH9PJ3n8AuIuzEnxv8UHEkjSZouEKvsWk7gi58r7/NBnmcMt/wBgOdXo0eI4gBG49iZQQNrWcPEp2Mk9pA8WH1J12ozdTUVDju2Fh2ijAL7eLuQV3NRWzUXH48P2/wAsueHacNa4G99yXEk6+JXY2mjLzu5WgPG6sRk6pect0i+ONow1ZV9o7TYK8IOKt+QrlekV72hrw63VMJ9o0WwyUZ2wmJjnXc0XbqPC6o2o6Y9B9m3Ejdh8jtm3vuArLLBAcuOSVstsPbMBlsHtG9/lr1QcmSEnbM6WOvksaCqLCRlPi0m9vIpXLhU1oC3RZxPzC5SksXUG3YypcMpT3B9s0xDnQc8bSVlXLax8lo5M6naI4fClilCX8ADUOBtcjROwJmC2ZHInSpCsJzALTxv4PJcyEUm35DLI5i9T2yWLVYXVnu7I2xXKhQOssYhotDCtFh5CM0pIgEq6IPB1seSE8CKSgmPo6JsY035k7q8IKJKikEZQiE0hVxIllxxlfxJw101GXM1MLhLbq1oIcB6OJ9FDBZY3E8dqn54zbcD/AGuvtFiij1mg3hHERDWwyE2ZUM7Jx5Zt2E+ot6pTlRuFj3En0nX/ADZ6rI1ZTNtFRxDVMbGWk6nZL55pKl5CRjoy93FudoOnMXQlGTj2SAvJGLqy8w3H2TREXs8AgjxR1PVPyEjJGYr7uIY9zuwjbnka0El2tmt03Hgh95QVQ+56X6GcEVXdicQTtD44GCzRZ5A08rhV4WKfpTyy/j/uC5PJj6sMb8vb/wDoqsSbsVbCxxbD+G3Xu07EH5pfmKto7JHVhlNjL6Ylpbmi1zjcjrl9L6I/Hl+wUMLmm4+Ua+joIXBr2tBB1Ftrck7DHF7ATy5U2pA2M1bYvZQ8+RQVInFByds8z4ixJz3W115qONi/qfkYm6Wivo0bIVgy6paDtBtdKObT0EpMmeALNb7LTYf3O5lUb/Pkd7LFFRRYUVASNTbNuRuGjkEGWRJ6FM2W1QtXWxQjIB6D7rscJTfYHHBLIrRVPr7nQFq0cc+iKz+luSdstKOrDhYeqWy499jOcHB9X8FPWVJc46kDZWjGkb3GwRhjVoiEp+Ksi08cW0/wc06o8BHkeG2Ek2C0cMLPL8zPVnROstCCo8zybmxznq1i3pn0A4rIckevaBZpLfsOar2RQfFXAjXSyus1ospo6attsRZRLlSR12wtkgIBHNNxy9qovRIjkHKTjlBxyk4Rzbix1BXHM8G4owc0dVJDbuOu+I8jG47ebTp8Oqp4kKzhqjOZC6F7Ro6N5LfA3uFWSuLRMXUk/wAnpOEY3JPRxzgjVpa87FkjNHDyNrjzXm+ZHJhetp+P0eg4uSMo3Iz4E1U4dm1z7+8dGje+rrC+h03+KAoqG8j/APITLmVPqew4RRMZExrGZW5RoQL7e91K9VhjFQXXwYDi5SuRU4xwtRyl0jmdm4C5kjOR3mbaO9Qh5ePimvcjo5pwdJmCwqfsgCQ5wkDndqbWa1vsB3iQeS8jyYrJJ9X4el8v/wDD1eJ1GMX/AMZmqeftJZJDrd2nkNAtvNjeHjwx/rf9zG401n5WTL8XS/haCMRZdoWZhdM3ewmBPs4+SnlK4kz2g7FG5STy0d8UHA7Vf2I42V4p2Rw4tUQAFjxkPuEXHoeScxZEk4ryWz5IZpX1A66ukluXHfkNlFK7ZCjS0TYTTMqGugeO8O8087cxdXtxdoHJkY4Xc02BurPLJ6KaWy3qoxTxBnvuFz/a3p5oUvb/ACGwU36j8LwCYZSZzmPst+pS2afWJTJkb2/JcVNo2ucdA1uvQAJTF2nKkC+50YVsheS47kkrbaUVSNzFjqKHOKqXlodE8t2Nr7qbFcnGjkackNuoD0qOXC0tE0ItqU1jjS2YvKyOcuqJHFPY8qWkYOfjOXuZG1+/gmo5NNmfl4duEV8kXblWxyci3K4kcTpH0RGdVh3s060NqI7qWVoqqlh2VUwXXY9kDnjTZQ9hIouaYWA8An8DrZZk90wp2QOui9iBVZHCXXI4VScef/jDQB1PDUe9FKG3/sl7rh8Qw+ipMHNaPJmS5Ji3lI3X/Jv+lCfuAtXG/wAGo/CfFHw1U1MWOfTym5IaXNilGgcbDQEaHyCH1u415DLJVOz1U4W65s1jW6Bob3dBprYdOngsaf0iWbI5zr4SrX+o76/WKSLSjiLGBpNyOYW1xsPo41C7oXlK3Zk+Oq9zIOyaCXTuy2G+T/2H/wCOnqludmWPE1fnRXh43PMv1sSCjoZImlsEko09tkgPq0gJKPG48FcE2/yaryZ29ySApuD6V4JjY6mkPs2BDL8rsPLysr5f8VVNfwAxY/Rd4vBisZoXxExyCzm8xqCORHgstweOfVmtiyqcexX4cy0gPj8l2V3AYvRdYpFdnlcfcJPBKpA0tlfVM/TYmIS97IWmV7wbJhVYZPQ+iBika5xsdrXsdVdL1fai2HH6k+ptqZ97OPS6iLpWJZYtNxMli85fKbXOZ1h5DYIcfFsdn7Yxj+jTYbRZI9fd1PiVk5s3aVCcnbMzxbWE9nED7V3Ot05D6rT4ONJOb+B3hY+z7MqALDRNXs2HpCXXAXKzlxFiriGdlK6wEoWPDeqlTbF3gxx2cNE3htGTyoxkqRHIdE321QlDCnk7fhEYTeFe0yufK50fRrDqsRDgQWgo1WiACeDUoTVEUPbyHILl5LBIdom4eCkmRvqA1XugblQRDLm80WMuxdPROEyvBxy6jjlJxBW0jJmOjkY17HbtcLgriGrM1Rfh3QxyGXsjITo1shzNYOgHP1uopFPSRpqamZG0NY0NA2DQAFJdJLwTLiRCVxwBWTOaS9sBlyjTKWZzffLmIFvVK5Jvtahdf80EhGL/AKqMnV8buz5BTSxkG3fa0a+rlm5uZNy6xVP8GhHiY4xc5O1+Q+DiPOA1zQXEXtzsdL26b6qkuTJe2a2Vjx4S92OWjKcdxHMyTkWlp8xqPqfgk8z7SsaxatGZwaPNJ5C6X5EqgOSdIu6lt4z5/ZJQfvK3sr+zvC3TXNb4Jm6yMpeyOuY1liRsL/VTibnpBYmSjqTJK9511s3wC2HFY4qKNT6eknbNlgspMEgLjpt+yS5OmL/UYxWdUiLAaTtJO0OzNB/l1SvKyKEOq+RPNktmprjlisOZssrFudiqds81xSbPUvI2b3R6L0uGPXCkbvCjSFUDc2cAuE29ilq6yyYoauVvwUnmUPIoR44tbM7LyW5a8Cko0caQrPNKQ1xREL+QaV6LFWyJVCJzCn4eDz3I3Oz6CikN156LNItGHQJpeCoPO9DlI5IjaoirZz0Sl2ibiBsBfJrdTewbLWkYLXHNNYo/IVeAhHJOXHHLjjlxwhKhnDHygKjyxRKi2Rz1Ia0lzmt8zohyzUrtFowbekVFVxNTxAOdIXX07ouL+miXlzIwXZ7GMfDyZXUTH1fGMrZnSMje2J5sxptlc4b2I1a49Fly5eR5O0Hr8G1j+mY3irspNea8l83Eo5HNiqY8jiLhr7a8zY8yPBEWe5e9NGfLj+z2O0LUUccbhIzplte4y9B6i6nLTfYrgh1XVIo+NGXp83Sx+dvulXG3YxF01/JmcDisHO6iyQ5UraiNt2WMrwG6paKbeiGQ03/i1/qJHgESf+Zr8FPkzfE84k/TadRobLS4UHj9zGIRdFTTUhZYJueRSNTjrqkazDwRDG23tvdcnoP4UlyZJuxL6hJSztr8IvsIpcjLt2JKx+Rk7S2ZkmLjcoY0X5Au+AUcWPaT/wBCcKtnmlGcxLju4l3xK9Nl1pfB6XBFKIU9BRTLLYrFzAV8jwFUpJ0cUeCEss78iBMIRmRySWKKkV62hkr7qUTFA7jco+NCXKnolBsm1pGJO5M+g6ZeeiabLFjxZMKWiKIWR5ueqiEOxz0I6Igq6xuL2Um9CtjJICYhBt7BeRz8PBcOnPxTHo7O67DWi2iOlRcVSccuOIXF1+RH00UbKXJMR8p2aNfHYfuhznWl5CpfLGuj1u55Om2gA8et/VUk9VJnLzoElY3XUu8AC4paTiHi2JI+Mtyuidb+5l1DcOtOJyjJu1Jf6lcJKJoLXtaOoeLjz1QVPjLWT/cN6ef+j/Yqa+jo7MFLGMvasmk7Id3uajc2HLZC5GTDLJF49tef4GOIsuLtKXyml/csa6gjny9q0kNdnBIIII2II1CJJQn5KKUoaRRsLoy69y0GwJ1u3NZp+CyvTyQyOvA85xlFfkXiBn/aTA9Cf58k237RRK53+0Z/C2/phYmd+8eErd7LsXggrcRqSGEDyTWKHustCNsp6KG7v5unMkqiOVSLuOhsWuI8f2SynadC2XltKkWsMVw1tttvM7lJ5c1oXlkvZaUsZY1wO26RySU2mgPllBxlUfpnq4ZR6laH06HvG+PH3GNpGWWzkdm9F0ghyGgcmmI0LrBpDwujVgM6lWhjimItGe4y+RmayImijx/kjldsjxQIY56ukClKkNjGqYgqMvkS7D5nWCK2Iwj7me9tlK88jSoKjqAwdSiWdRPSVQ326ouKfV7KyRZNIK2ItSWgI5WOOUnHLjjlFnCXUOSo4bI+wv8ALqubpWctugaNj9y4AdB+6Tj28thm4+EgOfEIxm1Btcn/AGUpPlwvWw0cM2B0vE8BDi1zO7v323J6NF7u9FOLma1H/UmfGd+SP/qxpBIglLQLlxblFhv7VlEudOXiAWH09tpdlsr/APrujkBZkcS4EasGU36uJ2Uz5eP0vdDyvwOP6Hy4e61S/e/9Aiiwy9O6Zrsh1Ibbu5W+y2383SvE4T9B5bpvf/YTnyv8Xr5XgiqMRmaP1AMuxfoQPE21Cq8maC920MLFiu4jWjQAaj7KvbVFn5sG4iH/AG0v+B+KtPSOirZnqBtmN8lhZdyYwV9ZLqUxjiSkVte7QfFNYlsNiVsP4Xw8PBkdsNvEoPMyte1FeTlrSNHU0wcB0GiQjmcW0Z7Vj6GH3vQIOWb8EklWe75qmNbL41sxnFNQ1zgAb2W3woOKsf40NlPBGnJM1G6JnN5KllbHx06iyLoV7FKIciB4RIiuRJsFncmsQnmfwDkpmxditCshaexWosZCWTHZDUOuiORSGFI+gxEsZYnVl7Guau6kkkTrXUHBmF1BuW8t03xZtOvgFk8lsStRySVgxoddV76OQ2WdrdyrOSRDdHRXOp0HIfuqxuW2SSWV6OAqhwzhg0Orvjols099UExwS9wj4XEWOqXlBy0wilFeDPV2ARvfd7LsAsG3uy9yblvMpGPGjCbdDsc76+QCLCo43uLQALnYWtoOXJUliipdhpZX1oixZgqGGIyMji/9r3PDBbkzNfmfotLhQv3z8fBg/VOXyI1j4rqfzL/2r9fsynEfBv5cRVFO5r2uc1oyPzMdrqPhf4J7MoSg7WvH8GfwOd9T4nJgpTtTdX8ePDR7JDA0RBttC3UeY1VYY1HH1/Royb7N/szVJLnYSdDq23TkVkpNNpmhGfaKaFjp7NJG+9vPWyDKCSbQZT3TKfGakPYY+ZaQbpDNyLSQdRrZTUo7oCzsn3WERW1bbXvyTGN/gugRtP2hA6iyP36Kyyn1VmpZEI2NjbsAs1ycm5sQyTcmFlvcAS1+45EoaGgcrKjfZkpGcx/FtC1q0+Jx15Y1ihZkTdx1WtqKNbHBRQU1vJDbLXsmih0uqOXwQ5bokcuOIyrpnMHqAjQATAJwmcbEcq2QWTHwKyZIApTB1oYURAZEMgRYi8nTPoMOuUm9g0dIhTLCIJJZUvcbruncS6oBlex76guCP3tA/I/8yGRlx5AlSpUtljLuxZ8kndGnX9gl555N6JjBeWaTD8QLzYtAsOqZxcht9aLOOrDp5msBc42A5lMuSirZSrM5UYl37ge0dPoFlZslXJfJoY4aolmxV0bC5w0AvZLy5c8ce1ErBGUqK9nEo3kjc2+u1/og/wDXNP3xC/8ASWvawKrm7RznN0DrIfrqU7+Bj02sfX5BMSoRUOp2xN7RrGvG3ca693annyK0ebgnmhF43qvB5rj8uEczxyi27av415IpMHnjjETCBGyXtiy93EkWsOjRe6W4PIlNSxfgJy49JQyQSaTtr5/TPQMPlJiaH+1axW1GaSolSco9mZmsHZuk8bH47/RIcj77DcfLUOpLT1YIv6JSU6NCElJGVxeXNM4+iyM7ubGURxpVh6oras6uBTMPCZZD8Lgvc9CiT+0BmyU6L6KK+qzJzrQukFMIAsSgNNvRZFbjNaA2zSmeNibdsLCJi62Qk+K28caRq8bFojhbZTJjUg6npiUCc0heeVRDHRWACCpW7BwyW7Bp22RoOw8HYOUUsxTBdcp0UqwKqp01iyCubEwXskz3sS9LYrmIkGCyqloY9tka0KxjJkLmq8WDy43Z740pSwAsh1Q8hZEkB1VIs4Sqq/a+SMpqhfL9xJh0mZl0XG7RWJXY1WXcIm+77XmVMpfCIl5D4g2Jmd1raDa5JIvYW35q7j1j2YaHudIidiNyBDGTbXMe6NfAaoTyL+lDEcD+QaoEshu8newHJvkENynJ7DxxwitE1NEM1j7g36k/6UZGlplUmloGxaQdm/UWsfos/NK4P+41iW1YVgOBlzI3zWLcjbM1100Llo8Tg2lLLv8AQlm5O6gWldgUUgtbJbbLYDyt0TWfgYsi0qf6BYuVkxvyOwvD+xZ2dgQL2I6Hlbkohinjj1eweRxlJyXyA4mwRHNtf+WSc8Cxy7LyUlOo7K9uM5STfToVdTkmLvKkRVs4kzOPMWVJS7eSO9eALDXaEJWZpcaWgXFaIavG+5SeXFascWSmUU73AXGwKWjBfJofclJAzGFxuUZRopKVIu6eGwAS3Iy/An9zssmiwWa9suA4jUWHij4YNsskZTEKqxsN1r4serY/x8PZWwKnp3PJsL21KNKagtjznGCoPosLc8X8bW/dAy8iMRfJyEtIuYaMMFt+pSUsvZ2JSyWyGoc1vtGyvBSfgvjjKXgr6x4NrG6ZxpryPYU0tkcEWt1aciZy+DpBa6mOy1ldPOnMWOxbLkoHfLdMKFCvexmZXTRTpYyR+iLAG0k9ETnIq0ByRs93SsjORJJyVchyGk6FAssCE6q2PYtl+4tIe7ESNDYlPLUSqKvB4w5wJFySSb9Q0n6roeTg7iP2aUcrk+uTf5lE5f2xGuKtjsOboEHH4Gph4CswTZT4sbDRI8ljeBWVUwuGg7FzQfEEi6TSTcU/yguXUW0egtC9YtGEKuZxE9yBOTohmP4hec9rn1N/qs6TbewORlPINFwtMlcdB5IUi0NsWm3CBI1MWieo2KHJaGLdmfqB7Q5JOXk0uO/8NgtEO83zXPwRLwy6o1mZ3sF8E1SUKCJRQYm83OqfwJUFh5KAC9ytDwkaV0lRpcEiaIgQN91m8mTcxTLJ2GO0QELtkLyro5FFiZu/Xkn8KqJp8Ve0EmNiEaISyxaO4ln9wq2+wFVnRMYvIWylqTqtbAhPO9kAKM0CslGyG1s5N0QuKMVEapAzez//2Q==]Heer Ranjha[/photo] [photo=http://4.bp.blogspot.com/-T6wXdW-itLo/Tx5ca7sC1zI/AAAAAAAAAHg/w831BpV3m6E/s1600/heer_ranjhas_love_affair_to.jpg]Ranjha Wallpaper[/photo] [photo=https://scontent-mxp1-1.xx.fbcdn.net/v/t1.0-9/20046755_1345805215472592_245560170002886359_n.jpg?oh=fa329765beff206b8cf6a0d46ea8715a&oe=59FC85AA]vanjli[/photo] [/gallery]


Click to View the full poetry article at (fundayforum.com)

WaQaS DaR

اک پہیلی زندگی چاہت کے صبح و شام محبت کے رات دِن ’’دِل ڈھونڈتا ہے پھر وہی فرصت کے رات دِن‘‘ وہ شوقِ بے پناہ میں الفاظ کی تلاش اظہار کی زبان میں لکنت کے رات دِن وہ ابتدائے عشق وہ آغازِ شاعری وہ دشتِ جاں میں پہلی مسافت کے رات دِن سودائے آذری میں ہوئے صنم گری وہ بت پرستیوں میں عبادت کے رات دِن اِک سادہ دِل ، دیارِ کرشمہ گراں میں گم اِک قریۂ طلسم میں حیرت کے رات دِن لب ہائے نارسیدہ کی لرزش سے جاں بلب صہبائے ناچشیدہ کی لذت کے رات دِن روئے نگار و چشمِ غزالیں کے تذکرے گیسوئے یار و حرف و حکایت کے رات دِن ناکردہ کاریوں پہ بھی بدنامیوں کا شور اختر شماریوں پہ بھی تہمت کے رات دِن سوداگرانِ منبر و مکتب سے رو کشی جاں دادگانِ دانش و حکمت کے رات دِن اہلِ قبا و اہلِ ریا سے گریز پا وہ واعظانِ شہر سے وحشت کے رات دِن میر و انیس و غالب و اقبال سے الگ راشد ، ندیم ، فیض سے رغبت کے رات دِن فردوسی و نظیری و حافظ کے ساتھ ساتھ بیدل ، غنی ، کلیم سے بیعت کے رات دِن شیلے کا سحر ، کیٹس کا دُکھ ،بائرن کی دھج ان کافرانِ عشق سے نسبت کے رات دِن تشکیک و ملحدانہ رویے کے باوجود رومی سے والہانہ عقیدت کے رات دِن جیسے مئے سخن سے صراحی بھری ہوئی زورِ بیان و ُحسنِ طبیعت کے رات دِن یاروں سے شاعرانہ حوالے سے چشمکیں غیروں سے عاشقانہ رقابت کے رات دِن شعری سفر میں بعض بزرگوں سے اختلاف پیرانِ میکدہ سے بغاوت کے رات دِن رکھ کر کتابِ عقل کو نسیاں کے طاق پر وہ عاشقی میں دِل کی حکومت کے رات دِن ہر روز ، روزِ ابر تھا ہر رات چاند رات آزاد زندگی تھی ، فراغت کے رات دِن وہ صبح و شام دربدری ، ہم سنوں کے ساتھ آوارگی و سیر و سیاحت کے رات دِن اِک محشرِ خیال کے ہجراں میں کانٹا تنہائی کے عذاب ، قیامت کے رات دِن اک لعبتِ جمال کو ہر وقت سوچنا اور سوچتے ہی رہنے کی عادت کے رات دِن اِک رازدارِ خاص کو ہر وقت ڈھونڈنا بے اعتباریوں میں ضرورت کے رات دِن وہ ہر کسی سے اپنا ہی احوال پوچھنا اپنے سے بھی تجاہل و غفلت کے رات دِن بے وجہ اپنے آپ کو ہر وقت کوسنا بے سود ہر کسی سے شکایت کے رات دِن رُسوائیوں کی بات تھی رُسوائیاں ہوئیں رُسوائیوں کی عمر میں شہرت کے رات دِن اِک دُشمنِ وفا کو بھلانے کے واسطے چارہ گروں کے پند و نصیحت کے رات دِن پہلے بھی جاں گُسل تھے مگر اس قدر نہ تھے اِک شہرِ بے اَماں میں سکونت کے رات دِن اس دولتِ ہنر پہ بھی آزارِ مفلسی اس روشنیٔ طبع پہ ظلمت کے رات دِن پھر یہ ہوا کہ شیوئہ دِل ترک کر دیا اور تج دیئے تھے ہم نے محبت کے رات دِن ہر آرزو نے جامۂ حسرت پہن لیا پھر ہم تھے اور گوشۂ عزلت کے رات دِن ناداں ہیں وہ کہ جن کو ہے گم نامیوں کا رنج ہم کو تو راس آئے نہ شہرت کے رات دِن فکرِ معاش ، شہر بدر کر گئی ہمیں پھر ہم تھے اور قلم کی مشقت کے رات دِن ’’خونِ جگر ودیعتِ مژگانِ یار تھا‘‘ اور مدعی تھے صنعت و حرفت کے رات دِن کیا کیا ہمیں نہ عشق سے شرمندگی ہوئی کیا کیا نہ ہم پہ گزرے ندامت کے رات دِن آکاس بیل پی گئی اِک سرو کا لہو آسیب کھا گیا کسی قامت کے رات دِن کاٹی ہے ایک عمر اسی روزگار میں برسوں پہ تھے محیط ، اذیت کے رات دِن ساماں کہاں کہ یار کو مہماں بلایئے اِمکاں کہاں کہ دیکھئے عشرت کے رات دِن پھرتے تھے میر خوار کوئی پوچھتا نہ تھا قسمت میں جب تلک تھے قناعت کے رات دِن سو یہ بھی ایک عہدِ زیاں تھا ، گزر گیا کٹ ہی گئے ہیں جبرِ مشیت کے رات دِن نوواردانِ شہرِ تمنا کو کیا خبر ہم ساکنانِ کوئے ملامت کے رات دِن احمد فراز


Click to View the full poetry article at (fundayforum.com)

WaQaS DaR

سال بہ سال ، یہ سال بدل جاتے ہیں ایّامِ زیست کمال ، زوال بدل جاتے ہیں اِک لمحہ خاص بھی ہوجاتے ہیں خاک لوگ بھی کیا کیا ، کمال بدل جاتے ہیں مُحبتیں ، عشق ، نفرتیں ، دائمی جُدائیاں دھیرے دھیرے سب خیال بدل جاتے ہیں تشنہ لبیِ مانندِ دشت صحرا جاتی نہی جواب مل جائیں تو سوال بدل جاتے ہیں سمجھ جاؤں ، جب فریب یار و اغیار کے سب یہ میرے پھر نئی چَال بدل جاتے ہیں مطلب ہوجائیں پورے ، جب بے وفاؤں کے حسبِ ضرورت ، یہ حال بدل جاتے ہیں پہلو میں روز ، نئے لوگ بدلتے ہوئے یہ لوگ سمتیں جنوب سے شمال بدل جاتے ہیں خواہشِ وصلِ حُسن کو جب مل جائے تعبیر پھر نظریں ، زاویہ جمال بدل جاتے ہیں جفا ، دھوکہ ، فریب ، جھوٹ ، خود غرضی مطلب ، ضرورتیں ، رویّے ، اشکال بدل جاتے ہیں


Click to View the full poetry article at (fundayforum.com)

WaQaS DaR

اَپنی آنکھوں کے سمندر میں اُتر جانے دے تیرا مجرم ہوں مجھے ڈوب کے مرجانے دے اے نئے دوست میں سمجھوں گا تجھے بھی اپنا پہلے ماضی کا کوئی زخم تو بھر جانے دے آگ دنیا کی لگائی ہوئی بجھ جائے گی کوئی آنسو میرے دامن پہ بکھر جانے دے زخم کتنے تیری چاہت سے ملے ہیں مجھ کو سوچتا ہوں کہ کہوں تجھ سے مگر جانے دے زندگی! میں نے اسے کیسے پرویا تھا نہ پوچھ ہار ٹوٹا ہے تو موتی بھی بکھر جانے دے ان اندھیروں سے ہی سورج کبھی نکلے گا رات کے سائے ذرا اور نکھر جانے دے


Click to View the full poetry article at (fundayforum.com)

WaQaS DaR

اب وہ زیبائشیں کہاں باقی دل کی فرمائشیں کہاں باقی یونہی خود ساختہ سا ہنستا ہوں ورنہ گنجائشیں کہاں باقی کوئی کہہ دے تو مسکراتا ہوں خود میں اب خواہشیں کہاں باقی دسترس میں حیات ہے لیکن اس کی آرائشیں کہاں باقی ساری آلودگی ہے یادوں کی نئی آلائشیں کہاں باقی روز و شب آج بھی ہیں پہلے سے اِن کی پیمائشیں کہاں باقی www.fundayforum.com


Click to View the full poetry article at (fundayforum.com)

WaQaS DaR

زندگی خاک نہ تھی خاک اڑا کے گزری تجھ سے کیا کہتے، تیرے پاس جو آتے گزری دن جو گزرا تو کسی یاد کی رَو میں گزرا شام آئی، تو کوئی خواب دکھا تے گزری اچھے وقتوں کی تمنا میں رہی عمرِ رواں وقت ایساتھا کہ بس ناز اُٹھاتے گزری زندگی جس کے مقدر میں ہو خوشیاں تیری اُس کو آتا ہے نبھانا، سو نبھاتے گزری زندگی نام اُدھر ہے، کسی سرشاری کا اور اِدھر دُور سے اک آس لگاتے گزری رات کیا آئی کہ تنہائی کی سرگوشی میں ہُو کا عالم تھا، مگر سُنتے سناتے گزری بار ہا چونک سی جاتی ہے مسافت دل کی کس کی آواز تھی، یہ کس کو بلاتے گزری www.fundayforum.com


Click to View the full poetry article at (fundayforum.com)

WaQaS DaR

Short Biography of Nasir Kazmi a Poet of Modern Urdu Ghazal ناصر کاظمی 8 دسمبر، 1925 ہندوستانی پنجاب کے شہر امبالہ میں ایک ہندوستانی رائل آرمی کے ایک صوبیدار میجر محمد سلطان کے گھر پیدا ہوئے والد کی نوکر ی کی وجہ سے ناصر کو کئی شہروں میں رہنے کا موقع ملتا رہا۔ مگر ناصر کاظمی نے اپنا میٹرک کا امتحان مسلم ہائی اسکول انبالہ سے پاس کیا۔ پھر کالج کی تعلیم کے لیے وہ لاہور کے اسلامیہ کالج آگئے جہاں پر وہ ہاسٹل میں رہائش پزیر رہے۔باوجود اس کے ناصر کاظمی رفیق خاور کے چہیتے شاگرد رہے ناصر کا دل جانے کیو ں پڑھائی سے اچاٹ ہوگیا ۔۔ اور نا صر نے اپنا بی اے بھی ادھورا چھوڑ دیا اور تعلیم کو خیر آباد کہہ دیا۔ پاکستان بننے کے بعد ناصر کاظمی لاہور منتقل ہوگئے مگر جلد ہی ان کے سر سے والدین کا سایہ شفقت اٹھ گیا۔ جس وجہ سے وہ بہت اداس اور ملول رہنے لگے۔ ناصر کافی عرصہ تک لاہور سے شائع ہونے والے مجلات سے بھی منسلک رہے۔ پھر یہ سب چھوڑ کی ریڈیو پاکستان سے ایسے منسلک ہوئے کے پھر ریڈیو پاکستان اور شاعری کے ہوکر رہے گئے۔ ناصر نے اپنی شعر گوئی کا آغاز تو پاکستان بننے سے پہلے ہی کر دیا تھا۔ناصر کی شعر گوئی کا آغاز ۱۹۴۰ء سے ہوا۔حفیظ ہوشیارپوری سے تلمذ حاصل تھا۔ پاکستان بننے کے بعد ناصر نے جدید غزل کو ایک نیا اسلوب دیا ۔ بہت سے لوگ ان کو نئے دور کی غزل کا موجد بھی کہتے ہیں گو کہ ان کی کچھ نظمیں بالا کی چاشنی اور ادب کا مزاج لے کر مشہور ہویں "برگِ نَے" ”دیوان“ اور ”پہلی بارش“ ناصر کاظمی کی غزلوں کے مجموعے اور ”نشاطِ خواب“ نظموں کا مجموعہ ہے۔ سٔر کی چھایا ان کا منظوم ڈراما ہے۔ برگِ نَے ان کا پہلا مجموعہ کلام تھا جو 1952ء میں شائع ہوا۔ ناصر کاظمی 2 مارچ، 1972ءکو لاہور میں اپنے خالق حقیقی سے جاملے۔۔ گئے دنوں کا سراغ لے کر کدھر سے آیا کدھر گیا وہ عجیب مانوس اجنبی تھا مجھے تو حیران کر گیا وہ بس ایک موتی سی چھب دکھا کر بس ایک میٹھی سی دھن سنا کر ستارۂ شام بن کے آیا برنگ خواب سحر گیا وہ خوشی کی رت ہو کہ غم کا موسم نظر اسے ڈھونڈتی ہے ہر دم وہ بوئے گل تھا کہ نغمۂ جاں مرے تو دل میں اتر گیا وہ نہ اب وہ یادوں کا چڑھتا دریا نہ فرصتوں کی اداس برکھا یوں ہی ذرا سی کسک ہے دل میں جو زخم گہرا تھا بھر گیا وہ کچھ اب سنبھلنے لگی ہے جاں بھی بدل چلا دور آسماں بھی جو رات بھاری تھی ٹل گئی ہے جو دن کڑا تھا گزر گیا وہ بس ایک منزل ہے بوالہوس کی ہزار رستے ہیں اہل دل کے یہی تو ہے فرق مجھ میں اس میں گزر گیا میں ٹھہر گیا وہ شکستہ پا راہ میں کھڑا ہوں گئے دنوں کو بلا رہا ہوں جو قافلہ میرا ہم سفر تھا مثال گرد سفر گیا وہ مرا تو خوں ہو گیا ہے پانی ستم گروں کی پلک نہ بھیگی جو نالہ اٹھا تھا رات دل سے نہ جانے کیوں بے اثر گیا وہ وہ مے کدے کو جگانے والا وہ رات کی نیند اڑانے والا یہ آج کیا اس کے جی میں آئی کہ شام ہوتے ہی گھر گیا وہ وہ ہجر کی رات کا ستارہ وہ ہم نفس ہم سخن ہمارا صدا رہے اس کا نام پیارا سنا ہے کل رات مر گیا وہ وہ جس کے شانے پہ ہاتھ رکھ کر سفر کیا تو نے منزلوں کا تری گلی سے نہ جانے کیوں آج سر جھکائے گزر گیا وہ وہ رات کا بے نوا مسافر وہ تیرا شاعر وہ تیرا ناصرؔ تری گلی تک تو ہم نے دیکھا تھا پھر نہ جانے کدھر گیا وہ nasir kazmi poetry nasir kazmi poetry images nasir kazmi poetry urdu Faiz Ahmad Faiz Poet of Hope Love and Revelation Saghar Siddiqui A Poet of Sadness & Love Urdu Sad Poetry Dukh by Faraz


Click to View the full poetry article at (fundayforum.com)

WaQaS DaR

ﺍﺩﺍﺱ ﺷﺎﻣﻮﮞ ﮐﯽ ﺳﺴﮑﯿﻮﮞ ﻣﯿﮟ ﮐﺒﮭﯽ ﺟﻮ ﺁﻭﺍﺯ ﻣﯿﺮﯼ ﺳﻨﻨﺎ ﺗﻮ ﺑﯿﺘﮯ ﻟﻤﺤﻮﮞ ﮐﻮ ﯾﺎﺩ ﮐﺮ ﮐﮯ ﺍﻧﮩﯽ ﻓﻀﺎﺅﮞ ﻣﯿﮟ ﻟﻮﭦ ﺁﻧﺎ ﺗﻢ ﺁﯾﺎ ﮐﺮﺗﮯ ﺗﮭﮯ ﺧﻮﺍﺏ ﺑﻦ ﮐﺮ ﮐﺒﮭﯽ ﻣﮩﮑﺘﮯ ﮔﻼﺏ ﺑﻦ ﮐﺮ ﻣﯿﮟ ﺧﺸﮏ ﮨﻮﻧﭩﻮﮞ ﺳﮯ ﺟﺐ ﭘﮑﺎﺭﻭﮞ ﺍﻧﮩﯽ ﺍﺩﺍﺅﮞ ﻣﯿﮟ ﻟﻮﭦ ﺁﻧﺎ ﻣﯿﺮﯼ ﻭﻓﺎﺅﮞ ﮐﺎ ﭘﺎﺱ ﺭﮐﮭﻨﺎ ﻣﯿﺮﯼ ﺩﻋﺎﺅﮞ ﮐﺎ ﭘﺎﺱ ﺭﮐﮭﻨﺎ۔۔۔ ﻣﯿﮟ ﺧﺎﻟﯽ ﮨﺎﺗﮭﻮﮞ ﮐﻮ ﺟﺐ ﺍﭨﮭﺎﺅﮞ ﻣﯿﺮﯼ ﺩﻋﺎﺅﮞ ﻣﯿﮟ ﻟﻮﭦ ﺁﻧﺎ... www.fundayforum.com


Click to View the full poetry article at (fundayforum.com)

WaQaS DaR

Kisi ki yaad dil me hai koi Ehsas baqi hai Badalte mosamon k darmian Ek Raaz baqi hai Abhi me safar me hon Milay gi manzil mujhe Magar in raston k darmian Ek saath baqi hai kahin pe sham dhalti hai kahin raat hoti hai Abhi to chand hai Chandni raat baqi hai Chale Aao kisi din tum hamara haal B dekho Hamara jism murda hai magar Ek saans baqi hai... Umeed hai phr B milega wo hamain Ek din KHUDA par hai bharosa KHUDA ki zaat baqi hai...!


Click to View the full poetry article at (fundayforum.com)

WaQaS DaR

PTV just launched its new season and in one of their new shows is Kis Se Kahoon. I must say, with dramas like this, PTV could easily climb the staircase to the top once again. Here are 4 reasons why: 1. The Story and its unpredictability _ Not your regular shadi-based drama: Mr and Mrs Qureshi (Mohsin Gillani and Seemi Raheel) have a daughter Hadiqa ( Sajal Ali). Mr.Qureshi has a job in Saudi Arab because of which he and his wife reside there, but his mother (Samina Ijaz) asks him to let her keep Hadiqa. He agrees, thus Hadiqa grows up in a village in the Northern Areas of Pakistan, among snow, trees, her grandmother and the village folk, learning all kinds of sports. Hadiqa is a bubbly, confident girl who has everything a person could dream of, but she has never considered the poor villagers inferior to her in anyway. She enjoys her grandmother’s company a lot. http://reviewit.pk/4-reasons-why-ptvs-kis-se-kahoon/


Click to View the full poetry article at (fundayforum.com)

WaQaS DaR

تر ی پنا ہو ں میں سات رنگو ں کا جال ہوگا کمال ہوگا مرے سنور نے کا سلسلہ جب بحال ہوگا کمال ہوگا یہ جھیل آنکھیں جو کھینچتی ہیں نظر کی ڈوریں محبّتوں سے اگر میں ان میں اتر گئی تو وصال ہوگا کمال ہوگا وہ رہبر ِ کاروان ِ الفت میں نقش ِِ مقصود ِ دلبری ہوں سو اب دم ِ وصل وحشتوں کا زوال ہوگا کمال ہوگا نوید ِ شاہ ِ محب کو سن کر تمام درباری جھومتے ہیں خبر اڑی ہے کہ اس برس بھی دھما ل ہوگا کمال ہوگا میں بچ بچا کے غلا ظتو ں سے بس اس بھروسے پہ چل رہی ہوں صنم جو میرا نصیب ہوگا غزال ہوگا کمال ہوگا نگاہ ِ من میں جواں محبّت کا ابر ِ بارا ں ہے محو ِ رقصا ں جمال ِ حسن ِ نظر میں جو یر غما ل ہوگا کمال ہوگا برستی بارش اور اسکی یادیں پھر اس پہ یہ جنو ری کا موسم حرا تمھارا جو ایسے موسم میں حال ہوگا کمال ہوگا ڈاکٹر حرا ارشد


Click to View the full poetry article at (fundayforum.com)

WaQaS DaR

اتنا آساں کہاں سامانِ بقا ہو جانا دل میں احساسِ فنا کا بھی فنا ہو جانا عشق دراصل ہے بے لوث وفا ہو جانا عشق کی راہ میں خود سے بھی جدا ہو جانا انکے ماتھے پہ لکیریں نہیں آنے پائیں انکے ہاتھوں کی لکیروں کی حنا ہو جانا ہونٹ ناراض تھے، آنکھیں تھیں مجسم الفت انکے بس میں ہی نہیں مجھ سے خفا ہو جانا لاکھ کرتی ہو کسی بت کی پرستش دنیا کیسے ممکن ہے بھلا بت کا خدا ہو جانا بنتا ہے ایک مرض موت کا باعث ورنہ ہر مرض کے لئے ممکن ہے شفا ہو جانا اسکو ایماں کہو یا عشقِ حقیقی جاوید مرحلہ کوئی ہو راضی برضا ہو جانا


Click to View the full poetry article at (fundayforum.com)

WaQaS DaR

ﺳُﻨﻮ ﺟﻮ ﻟﻤﺤﮯ ﮨﯿﮟ ﺁﺝ ﺣﺎﺻﻞ ﺍﻧﮩﯿﮟ ﮨﻤﯿﺸﮧ ﺳﻨﺒﮭﺎﻝ ﺭﮐﮭﻨﺎ ، ﻭﻓﺎ ﮐﮯ ﮔﻠﺸﻦ ﻣﯿﮟ ﭼﺎﺭﻭﮞ ﺟﺎﻧﺐ ﺑﮩﺎﺭ ﺭﮐﮭﻨﺎ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔ﻧﮑﮭﺎﺭ ﺭﮐﮭﻨﺎ ﻣﺤﺒّﺘﻮﮞ ﮐﺎ ﻭﻗﺎﺭ ﺭﮐﮭﻨﺎ ، ﺟﮩﺎﮞ ﻣﯿﮟ ﮐﺘﻨﮯ ﮨﯽ ﻟﻮﮒ ﺁﺋﮯ ﺭﮨﮯ، ﺑﺴﮯ ﮨﯿﮟ، ﺍُﺟﮍ ﮔﺌﮯ ﮨﯿﮟ ﻣﮕﺮ ﯾﮧ ﺟﺬﺑﮯ ﺍﺯﻝ ﺳﮯ ﮨﯿﮟ ﺍﻭﺭ ﺍﺑﺪ ﺗﻠﮏ ﺑﮭﯽ ﯾﻮﻧﮩﯽ ﺭﮨﯿﮟ ﮔﮯ ﺗﻢ ﺍﭘﻨﯽ ﺁﻧﮑﮭﻮﮞ ﻣﯿﮟ ﺳﺎﺭﮮ ﺟﺬﺑﻮﮞ ﮐﺎ ﭘﮩﻠﮯ ﺟﯿﺴﺎ ﮨﯽ ﺟﺎﻝ ﺭﮐﮭﻨﺎ ﺫﺭﺍ ﯾﮧ ﺳﻮﭼﻮ، ﺑﭽﮭﮍ ﮔﺌﮯ ﺗﻮ ﮐﮩﺎﮞ ﻣﻠﯿﮟ ﮔﮯ ﯾﻮﻧﮩﯽ ﺭﮨﯿﮟ ﮔﯽ ﺗﻤﺎﻡ ﺭﺍﮨﯿﮟ ﻣﮕﺮ ﯾﮧ ﺭﺍﮨﯽ ﻧﮧ ﻣﻞ ﺳﮑﯿﮟ ﮔﮯ ، ﺑﮩﺎﺭ ﻣﯿﮟ ﺑﮭﯽ ﺧﺰﺍﮞ ﮐﯽ ﺻﻮﺭﺕ ﻧﮧ ﭘﮭﻮﻝ ﮨﺮ ﺳﻤﺖ ﮐﮭﻞ ﺳﮑﯿﮟ ﮔﮯ ، ﻧﮧ ﺩﻝ ﮐﻮ ﺍﭘﻨﮯ ﺍُﺩﺍﺱ ﺭﮐﮭﻨﺎ ﮨﺮ ﺍﯾﮏ ﺟﺬﺑﮯ ﮐﺎ ﭘﺎﺱ ﺭﮐﮭﻨﺎ ﻣﻠﯿﮟ ﮔﮯ ﺁﺧﺮ ﯾﮧ ﺁﺱ ﺭﮐﮭﻨﺎ


Click to View the full poetry article at (fundayforum.com)

WaQaS DaR

اَدائیں حشر جگائیں ، وُہ اِتنا دِلکش ہے خیال حرف نہ پائیں ، وُہ اِتنا دِلکش ہے بہشتی غنچوں میں گوندھا گیا صراحی بدن گلاب خوشبو چرائیں ، وُہ اِتنا دِلکش ہے بدن بنانے کو کرنوں کا سانچہ خلق ہُوا خمیر ، خُم سے اُٹھائیں ، وُہ اِتنا دِلکش ہے قدم ، اِرم میں دَھرے ، خوش قدم تو حور و غلام چراغ گھی کے جلائیں ، وُہ اِتنا دِلکش ہے یہ جھاڑو دیتی ہیں پلکوں سے یا حسیں حوریں قدم کی خاک چرائیں ، وُہ اِتنا دِلکش ہے جھلک دِکھانے کی رَکھیں جو شرط جوئے شیر ہزاروں کوہ کن آئیں ، وُہ اِتنا دِلکش ہے جنہوں نے سایہ بھی دیکھا وُہ حور کا گھونگھٹ مُحال ہے کہ اُٹھائیں ، وُہ اِتنا دِلکش ہے چمن کو جائے تو دَس لاکھ نرگسی غنچے زَمیں پہ پلکیں بچھائیں ، وُہ اِتنا دِلکش ہے یہ شوخ تتلیاں ، پیکر پری کا دیکھیں تو اُکھاڑ پھینکیں قبائیں ، وُہ اِتنا دِلکش ہے غزال قسمیں ستاروں کی دے کے عرض کریں حُضور! چل کے دِکھائیں ، وُہ اِتنا دِلکش ہے حسین اِتنا کہ منکر خدا کا لگتا ہے بت اُس کو کلمہ پڑھائیں ، وُہ اِتنا دِلکش ہے وُہ پنکھڑی پہ اَگر چلتے چلتے تھک جائے تو پریاں پیر دَبائیں ، وُہ اِتنا دِلکش ہے گُل عندلیب کو ٹھکرا دے ، بھنورے پھولوں کو پتنگے شمع بجھائیں ، وُہ اِتنا دِلکش ہے اُداس غنچوں نے جاں کی اَمان پا کے کہا یہ لب سے تتلی اُڑائیں ، وُہ اِتنا دِلکش ہے خطیب پہلے پڑھیں حُسنِ حور پر آیت پھر اُس کا عکس دِکھائیں ، وُہ اِتنا دِلکش ہے جو آنکھ کھلتی ہے غنچوں کی شوخ ہاتھوں پر تو اَمی کہہ کے بُلائیں ، وُہ اِتنا دِلکش ہے وُہ بھیگی پنکھڑی پہ خشک ہونٹ رَکھے ذِرا تو پھول پیاس بجھائیں ، وُہ اِتنا دِلکش ہے حسین تتلیاں پھولوں کو طعنے دینے لگیں کہا تھا ایسی قبائیں ، وُہ اِتنا دِلکش ہے ذِرا سا بوسے پہ راضی ہُوا تو سارے گلاب نفی میں سر کو ہلائیں ، وُہ اِتنا دِلکش ہے غزال نقشِ قدم چوم چوم کر پوچھیں کہاں سے سیکھی اَدائیں ، وُہ اِتنا دِلکش ہے حریر ، اَطلس و کمخواب ، پنکھڑی ، ریشم دَبا کے ہاتھ لگائیں ، وُہ اِتنا دِلکش ہے بشارت اُس کی نُجومی سے سنتے ہی فرعون حنوط خود کو کرائیں ، وُہ اِتنا دِلکش ہے شریر مچھلیاں کافِر کی نقل میں دِن بھر مچل مچل کے نہائیں ، وُہ اِتنا دِلکش ہے جو کام سوچ رہے ہیں جناب دِل میں اَبھی وُہ کام بھول ہی جائیں ، وُہ اِتنا دِلکش ہے زَمیں پہ خِرمنِ جاں رَکھ کے ہوشمند کہیں بس آپ بجلی گرائیں ، وُہ اِتنا دِلکش ہے وُہ چاند عید کا اُترے جو دِل کے آنگن میں ہم عید روز منائیں ، وُہ اِتنا دِلکش ہے عقیق ، لولو و مرجان ، ہیرے ، لعلِ یمن اُسی میں سب نظر آئیں ، وُہ اتنا دلکش ہے جفا پہ اُس کی فدا کر دُوں سوچے سمجھے بغیر ہزاروں ، لاکھوں وَفائیں ، وُہ اِتنا دِلکش ہے ہمیں تو اُس کی جھلک مست مور کر دے گی شراب اُس کو پلائیں ، وُہ اِتنا دِلکش ہے صراحی جسم کی جھومے تو جام رَقص کریں دَرخت وَجد میں آئیں ، وُہ اِتنا دِلکش ہے بدل کے ننھے فرشتے کا بھیس جن بولا مجھے بھی گود اُٹھائیں ، وُہ اِتنا دِلکش ہے نُجومی دیر تلک بے بسی سے دیکھیں ہاتھ پھر اُس کو ہاتھ دِکھائیں ، وُہ اِتنا دِلکش ہے ہزار جنّوں کو بند کر دے ایک بوتل میں تو اُف بھی لب پہ نہ لائیں ، وُہ اِتنا دِلکش ہے سنا ہے ملکۂ جنّات رو کے کہنے لگی مرے میاں کو چھڑائیں ، وُہ اِتنا دِلکش ہے جو مڑ کے دیکھے تو ہو جائیں دیوتا پتھر ’’نہیں‘‘ بھی کہنے نہ پائیں ، وُہ اِتنا دِلکش ہے خطیب دیکھے گزرتا تو تھک کے لوگ کہیں حُضور خطبہ سنائیں ، وُہ اِتنا دِلکش ہے اَگر لفافے پہ لکھیں ، ’’ملے یہ ملکہ کو‘‘ تو خط اُسی کو تھمائیں ، وُہ اِتنا دِلکش ہے چرا کے عکس ، حنا رَنگ ہاتھ کا قارُون خزانے ڈُھونڈنے جائیں ، وُہ اِتنا دِلکش ہے حسین پریاں چلیں ساتھ کر کے ’’سترہ‘‘ سنگھار اُسے نظر سے بچائیں ، وُہ اِتنا دِلکش ہے صنم کدے میں جو پہنچے تو چند پہنچے صنم دُعا کو ہاتھ اُٹھائیں ، وُہ اِتنا دِلکش ہے گلی میں شوخ کی دائم مشاعرے کا سماں شجر بھی شعر سنائیں ، وُہ اِتنا دِلکش ہے گلی سے اُس کی گزر کر جو شاعری نہ کرے تو اُس کو اُردو پڑھائیں ، وُہ اِتنا دِلکش ہے کمر کو کس کے دوپٹے سے جب چڑھائے پینگ دِلوں میں زَلزلے آئیں ، وُہ اِتنا دِلکش ہے کبوتر اُس کے قریب آنے کے لیے بابو پیام جعلی بنائیں ، وُہ اِتنا دِلکش ہے اُسی کے نام سے اِہلِ سلوک پہنچے ہُوئے نمازِ عشق پڑھائیں ، وُہ اِتنا دِلکش ہے جسے وُہ مست کرے حشر میں بھی نہ اُٹھے بلا سے حوریں اُٹھائیں ، وُہ اِتنا دِلکش ہے غُبارِ راہ ہُوا غازہ اَپسراؤں کا نہا نہا کے لگائیں ، وُہ اِتنا دِلکش ہے خدا کے سامنے گن گن کے جھکنے والے سخی قیام بھول ہی جائیں ، ’’وُہ‘‘ اِتنا دِلکش ہے جہاں پہ ٹھہرے وُہ خوشبو کی جھیل بن جائے گلاب ڈُوبتے جائیں ، وُہ اِتنا دِلکش ہے وُہ ہنس کے کہہ دے جو حوروں پہ پردہ ساقط ہے دُکان شیخ بڑھائیں ، وُہ اِتنا دِلکش ہے نقاب اُٹھائے تو سورج کا دِن نکلتا ہے چراغ دیکھ نہ پائیں ، وُہ اِتنا دِلکش ہے گلاب ، موتیا ، چنبیلی ، یاسمین ، کنول اُسے اَدا سے لُبھائیں ، وُہ اتنا دلکش ہے شراب اور ایسی کہ جو ’’دیکھے‘‘ حشر تک مدہوش شرابی آنکھ جھکائیں ، وُہ اِتنا دِلکش ہے شباب ہے کہ ہے آتش پرستی کی دعوت بدن سے شمع جلائیں ، وُہ اِتنا دِلکش ہے حجاب اُتارے تو پھر بھی اُسے ثواب ملے کہ رِند جام گرائیں ، وُہ اِتنا دِلکش ہے


Click to View the full poetry article at (fundayforum.com)

WaQaS DaR

تمہیں کس نے کہا پگلی مجھے تم یاد آتی ہو ؟؟؟ بہت خوش فہم ہو تم بھی تمہاری خوش گمانی ہے میری آنکھوں کی سرخی میں تمھاری یاد کا مطلب ؟؟ میرے شب بھر کے جگنے میں تمہارے خواب کا مطلب ؟؟ یہ آنکھیں تو ہمیشہ سے ہی میری سرخ رہتی ہیں تمہیں معلوم ہی ہو گا اس شہر کی فضا کتنی آلودہ ہے تو یہ سوزش اسی فضا کے باعث ہے تمہیں کس نے کہا پگلی کہ میں شب بھر نہیں سوتا مجھے اس نوکری کے سب جھمیلوں سے فرصت ملے تو تب ہے نا میری باتوں میں لرزش ہے میں اکثر کھو سا جاتا ہوں تمہیں کس نے کہا پگلی ؟ محبت کے علاوہ اور بھی تو درد ہوتے ہیں فکرِ معاش، سکھ کی تلاش ایسے اور بھی غم ہیں اور تم ان سب غموں کے بعد آتی ہو تمہیں کس نے کہا پگلی ؟ مجھے تم یاد آتی ہو یہ دنیا والے پاگل ہیں ذرا سی بات کو یہ افسانہ سمجھتے ہیں مجھے اب بھی یہ پاگل تیرا دیوانہ سمجھتے ہیں تمہیں کس نے کہا پگلی ؟ مگر شاید مگر شاید میں جھوٹا ہوں !.... میں ریزہ ریزہ ٹوٹا ہوں


Click to View the full poetry article at (fundayforum.com)

Sign in to follow this  
Followers 0